پاکستان میں اے ٹی ایم پر سائبر حملوں سے صارفین کے کروڑوں روپے اڑا لیے گئے

اسلام آباد: اے ٹی ایم کے صارفین کے اکاؤنٹس سے غیر قانونی طور پر پیسوں کے فراڈ کی شکایات کے ساتھ ساتھ وسیع پیمانے پر اے ٹی ایم کارڈز کے ہیک ہونے اور پلاسٹک کارڈز کے بلاک ہوجانے کے واقعات منظر عام آنے کے بعد پاکستان بھر کے بینکوں میں افراتفری پھیل گئی۔ فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی (ایف آئی اے)، سائبرکریم ونگ، نے حبیب بینک لمیٹڈ (ایچ بی ایل) کی شکایت کے بعد، بینک اکاؤنٹس کی تحقیقات شروع کردی ہیں۔انہوں نے اعتراف کیا کہ سائبر اٹیک سے ملک میں تقریبا 600 گاہکوں کے تقریباً 10 کروڑ روپے نکال لیے گئے۔
ایف آئی اے کے ایک اہلکار کے مطابقخیابان اتحاد، کراچی میں نصب ایک اے ٹی ایم کو حملے کا نشانہ بنایا گیا ہے۔اس کے علاوہ، کراچی اور اسلام آباد سے بھی ایسی ہی شکایات ملی ہیں۔کراچی میں ڈالمن مال سے کئی ایسے واقعات کی اطلاعات موصول ہونے کے بعد اسلام آباد میں اسی طرز کے سائبر حملے کی اطلاعات ملی ہیں۔ جس کے باعث حبیب بینک سمیت مختلف بینکوں نے صارفینکو مزید نقصان سے بچانے کے لیے ان کے اے ٹی ایم کارڈز بلاک کر دیئے ہیں۔

Title: hackers are going after atms in pakistan | In Category: پاکستان  ( pakistan )
Tags: ,

Leave a Reply