حکومت پرویز مشرف کی گرفتاری اور حوالگی کے اقدامات کرے: عدالت کا حکم

اسلام آباد: سابق صدر ریاٹائرڈ جنرل پرویز مشرف کے خلاف غداری مقدمہ کی سماعت کرنے والی ایک خصوصی عدالت نے حکومت کو حکم دیا ہے کہ وہ سابق فوجی ڈکٹیٹر کو کسی بھی طرح کہیں سے بھی پکڑ کر لائے اور ان کی گرفتاری و حوالگی یقینی بنانے کے تمام قدامات کرے۔
مقدمہ کی سماعت کرنے والی پشاورہائی کورٹ کے چیف جسٹس یحییٰ آفریدی ، لاہور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس یاور علی اور بلوچستان ہائیکورٹ کی سینیئر جج جسٹس طاہرہ صفدر پر مشتمل بنچ نے وزارت داخلہ کے جوائنٹ سکریٹری کو حکم دیا کہ وہ یو کے اور یو اے ای میں مسٹر مشرف کی جائیداد ضبط کر لی جائے۔
جس پر وزارت داخلہ نے عدالت کو مطلع کیا کہ مشرف کی جائیدادوں حتیٰ کہ پاکستان میں ان کی سات جائیدادوں کو جن میں سے چار کے مشرف تنہا مالک ہیں ضبط کرنا مشکل ہے کیونکہ مشر ف کی بیوی صہبا مشرف ، بیٹی عالیہ رضا اور ایک اور رشتہ دار ہدایت اللہ کیشگی نے ان جائیدادوں میں مشترکہ ملکیت کا دعویٰ کر رکھا ہے۔

Title: govt told to take steps for musharrafs arrest extradition | In Category: پاکستان  ( pakistan )

Leave a Reply