سعودی عرب میں ہزاروں بلا تنخواہ کام کر رہے پاکستانی ملازمین کی شدیدمشکلات سے دوچار

کراچی: سعودی عرب میں ملازمت کرنے والے ہزاروں پاکستانی نہایت ناگفتہ بہ صورت حال سے دوچار ہیں اور ملک میں تنخواہوں کی عدم ادائیگی اور میعاد ختم ورک پرمٹ کے ساتھ ملازمت کرنے کے باعث ہمہ وقت گرفتاری کے خوف میں مبتلا رہتے ہیں۔
ایک ملازم نے ڈان کو ٹیلی فنی انٹرویو میں بتایا کہ ”ہم کام کی جگہوں سے بھاگم بھاگ رہائش گاہ واپس آجاتے ہیں“ اور پولس سے اس قدر خوفزدہ ہیں کہ پھر گھر کے باہر قدم بھی نہیں نکالتے۔ کم از کم100ملازمین کی تو کیفیت غیر یقینی ہے کیونکہ ان کا آجر ”دی یونائیٹڈ سیماک کمپنی“ جو ایک کنسٹرکشن کمپنی ہے، کئی مہینوں سے ان کی تنخواہیں ادا نہیں کر سکی ہے۔
جلد ہی تنخواہوں کی ادائیگی کا وعدہ کرنے کے باوجود عدم ادائیگی کے باعث ملازمین نے اس سال ایک مشکل فیصلہ لیا اور لیبر کورٹ تک معاملہ لے گئے۔لیکن ابھی عدالت کا فیصلہ آ نہیں آیا ۔
ادھر ان پاکستانی تارکین وطن کے پاس پیسہ کی قلت ہو گئی اور جوں جوں وقت گذر رہا ہے ان پر مایوسی طاری ہو تی جارہی ہے۔اس نے یہ بھی بتایا کہ صرف پاکستانی ہی اس کمپنی میں کام نہیں کر ہے بلکہ مختلف ممالک کے کم و بیش 500تارکین وطن اس کمپنی میںکام کر رہے ہیں۔وہ سبھی ایسی ہی صورت حال سے دوچار ہیں۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Expatriate pakistanis struggle as saudi construction firm holds wages in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply