باغی طالبان نے اپنے سربراہ ملا رسول کی پاکستان میں گرفتاری کی تردید کی

پشاور: باغی طالبان سربراہ ملا رسول کی پاکستان میں گرفتاری کی خبر جاری ہونے کے چند گھنٹے بعد ہی ان کے نائب ملا عبد المنان نیازی نے ان کی گرفتاری کی تردید کر دی اور کہا کہ ملا رسول افغانستان میں بخیر و عافیت ہیں اور جانبازوں کی قیادت کر رہے ہیں۔
نیازی نے مزید کہا کہ ان کا گروپ کسی ایک لیڈر پر منحصر نہیں ہے۔ ملا رسول یا کسی اور رہنما کی موت سے ہماری مزاحمت نہ کمزور پڑے گی اور نہ رکے گی۔ پاکستان کے بھی دو سینیئر افسران نے اس کی تصدیق کر دی کہ ملا رسول ان کی تحویل میں نہیں ہیں۔
ملارسول ایک سینیئر طالبان رہنما ہیں اور طالبان کے رہبر معظم ملا محمد عمر ، جن کی موت کی گذشتہ سال تصدیق کی جاچکی ہے،کے جانشین ہیں۔ان کی پاکستان میں پر اسرار گرفتاری سے ”اچھے اور برے طالبان“ کی ترجیح کے حوالے سے پھر سوال کھڑے ہوجائیںگے کیونکہ ملا رسول ملا اختر منصور کی قیادت والے مذاکرات میں ، اسے پاکستانی حکومت کی شرطوں کے مطابق بتاتے ہوئے،حصہ لینے کی پیش کش مسترد کر چکے ہیں۔
ملا رسول کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ وہ مفاہمتی عمل کے تئیں معتدل سوچ رکھتے ہیں لیکن ملا منصور کے طالبان کے رہبر معظم کے طور پر تقرر کے خلاف ہیں۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Dissident taliban group rejects mullah rasool has been detained in pakistan in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply