پاکستان میں نگراں وزیر اعظم ،وزراءاعلیٰ اور وزیروں نے نے الیکشن کمیشن میں اثاثہ جات کی تفصیل جمع نہیں کرائیں

اسلام آباد: ایسا محسوس ہتا ہے کہ وفاقی او صووبائی نگراں حکومتیں قانون کی پروا نہیں کرتیں کیونکہ عبوری وزیر اعظم ، نگراںوزراءاعلیٰ اور متعلقہ کابینہ وزیروں نے جائید اد کی تفصیل الیکشن کمیشن آف پاکستان کو دے کر قانونی تقاضہ کو پورا نہیں کیا۔

الیکشن ایکٹ مجریہ2017کے تحت کارگذار وزیر اعظم ، نگراں وزراءاعلیٰ اور ان کی کابنہ کے اراکین کے لیے لزام ہے کہ وہ عہدے سنبھالنے کے تین روز کے اندر اپنے اثاثہ جات کی تفصیل الیکشن کمیشن آف پاکستان میں جمع کرادیں۔

کارگذار وزیر اعظم جسٹس نصیر الملک نے یکم جون کو عہدہ سنبھالا تھا اور قانون کی رو سے انہیں، ان کے اہل و عیال اور ان کے مکلفین کو 4جون تک اپنے اثاثہ جات کی تفصیل الیکشن کمیشن میں جمع کردینا تھیں۔لیکن مہلت کی میعاد ختم ہوئے ایک ہفتہ گذر گیا ابھی تک انہوں نے اثاثہ جات کی تفصیل جمع نہیں کرائی۔

ان کی کابینہ کے 6میں سے صرف ایک وزیر نے ہی اپنی املاک کی تفصیل الیکشن کمیشن آف پاکستان کو جمع کرائی ہیں۔

Title: caretaker pm cms ministers fail to submit details of assets | In Category: پاکستان  ( pakistan )

Leave a Reply