نواز شریف کے خلاف باقی مقدمات کی سماعت جیل میں کرانے کا فیصلہ منسوخ

اسلام آباد: نگراں وفاقی کابینہ نے بدھ کے روزایک اہم فیصلہ کرتے ہوئے سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کے خلاف بدعنوانی مقدمات کی سماعت اڈیالہ جیل میں کرانے کا فیصلہ کالعدم قرار دے دیا۔

نواز شریف کو ایون فیلڈ اپارٹمنٹس ریفرنس میں جواز شریف کو مجرم قرار دے کر دس سال کی قید سنانے کے بعد ایک نوٹیفکیشن جاری کیا گیا تھاکہ باقی دو ریفرنسز (العزیزیہ اور فلیگ شپ) پر سماعت جیل کے اندر ہی کی ہو گی۔لیکن نگراں وزیر اعظم ریٹائرڈجج جسٹس نصیر الملک کی سربراہیمین نگراں وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں قومی احتساب بیورو کے آرڈی ننس کی روشنہ میں وزارت انون و انصاف سے جاری نو ٹی فکیشن کا معاملہ اٹھایا گیا ۔

اور اب طے پایا گیا کہ سابق وزیر اعظم کے خلاف باقی دو ریفرنسوں کی سماعت جیل میں نہیں بلکہ کھلی عدالت میں ہو گی۔معاملہ کی آئندہ سماعت30جولائی ہوگی۔ اگرچہ 25جولائی یعنی تاریخ انتخابات عین سرپر ہے اور اس موقع پر حفاظتی تیاریوں پر خصوصی توجہ دیتے ہوئے ملک کی امن و قانون کی مجموعی صورت حال پر زیادہ تبادلہ خیال ہو رہا ہے ۔

اس کے باوجود نوا ز شریف کے خلاف ریفرنسز کی سماعت کے حوالے سے بات کرنے کے لیے وقت نکال لینا کوئی اور ہی کہانی بیان کر تا ہے۔ گویا سبھی یہ چاہتے ہیں کہ باقی ریفرنسز کی کھلی عدالت میں سماعت کا نواز شریف کا مطالبہ تسلیم تو کر لیا جائے لیکن25جولائی سے پہلے کسی معاملہ کی سماعت نہ ہو تاکہ نواز شریف کو جیل سے باہر آکر عوام میں اپنے دیدار کراکے ہمدردی اور اس ہمدردی کی لہر میں ووٹوں کا بہاو¿ اپنی طرف کر لینے کا معمولی سا بھی موقع نہ مل سکے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Cabinet rescinds order directing jail trial of nawazs corruption cases in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply