پاکستان میں سکھ مسافر کی پگڑی کی توہین کرنے پر چھ افراد کے خلاف معاملہ درج

ساہیوال:پاکستان کے صوبہ پنجاب کے ساہیوال ضلع کے شہر چیچہ وطنی کی پولس نے ایک سکھ نوجوان کے صافہ کی توہین کرنے پر چھ افراد کے خلاف معاملہ درج کر لیا۔ ملتان کے ایک سکھ رہائشی 29سالہ مہندر پال سنگھ نے بتایا کہ وہ موورز کمپنی کی بس سے فیصل آباد سے ملتان آرہا تھا کہ دیجکوٹ کے قریب بس خراب ہو گئی۔ لیکن ڈرائیور نے کسی نہ کسی طرح بس چالو کی لیکن اس کی اسپیڈ بہت ہی کم تھی۔اور بس محض30کلومیٹر فی گھنٹے کی رفات سے چل رہی تھی۔اور وہ دیجکوٹ سے چیچہ وطنی ٹرمنل پانچ گھنٹے میں پہنچی۔ اس نے مزید کہا کہ اس نے اور ساتھی مسافروں نے ٹرمنل پہنچ کر ٹرانسپورٹ کمپنی کے اسٹاف سے بس کی ہلکی رفتار کے حوالے سے شکایت کی اور آگے کے سفر کے لیے کوئی متبادل بس دینے کو کہا ۔فریقین میں گرمام گرمی بھی ہو گئی جو ہاتھا پائی میں بدل گئی۔ اس دوران کمپنی کے چھ ملازمین اور ٹرمنل کے مالک نے مسافروں کو مارا پیٹا اور کمپنی کے مالک راشد گوجر نے مہندر پال کی کی پگڑی اتار کر زمین پر پھینک دی۔ چونکہ سکھ مذہب میں پگڑی کو مقدس حیثیت حاصل ہے اس لیے اسے زمین پر پھینکنے کا واقعہ توہین مذہب کی زد میںآتا ہے۔ ساتھی مسافروں کے مطابق مہندر سنگھ نے پولس کو ساری روداد گوش گذار کی اورکہا کہ چونکہ وہ بھی ایک پاکستانی شہری ہے اس لیے حملہ آوروں کے خلاف توہین مذہب کا معاملہ درج کیا جائے۔ چیچہ وطنی تھانہ کے ایس ایچ او خضر حیات نے ترمنل منیجر باقر علی، راشد گجر، فیض عالم، شکیل اور سناول کے خلاف مجموعہ تعزیرات پاکستان کی دفعہ 295,148اور 506کے تحت کیس درج کر لیا۔مہندر سنگھ نے الزام لگایا کہ کچھ مقامی سیاستداں ملزموں کی پشت پناہی کر رہے ہیں اور تحقیقات پر اثر انداز ہو رہے ہیں۔ انہوں نے پنجاب کے وزیر اعلیٰ سے اپیل کی کہ وہ معاملہ میںمداخلت کر کے انصاف یقینی بنائیں۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Blasphemy case against 6 for desecrating sikhs turban in pakistan in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply