فوجی انکوائری کمیشن سابق آئی ایس آئی سربراہ اسد درانی کے خلاف تحقیقات کرے گا

اسلام آباد: پاکستانی فوج نے انٹر سروسز انٹیلی جنس (آئی ایس آئی) کے سابق ڈائریکٹر جنرل ریٹائرڈ لیفٹننٹ جنرل اسد درانی کے ہندوستانی خفیہ ایجنسی کے سابق سربراہ اے ایس دلات سے اشتراک کی تحقیقات کرنے کے لیے ایک ’کورٹ آف انکوائری“ تشکیل دیا ہے۔

اس کے ساتھ ہی اس نے حکومت سے کہا ہے کہ وہ جنرل درانی پر سفری پابندی عائد کر دے۔ آئی ایس پی آر کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل آصف غفور نے ٹوئیٹ کیا کہیک بر سر ملازمت لیفٹننٹ جنرل کی سربراہی میں باقاعدہ تشکیل دیے گئے انکوائری کمیشن کو حکم دیا گیا ے کہ وہ مفصل تحقیقات کرے۔

اور حکومتی افسران بالا سے کہا گیا ہے کہ وہ اسد درانی کا نام ایگزٹ کنترول لسٹ میں درج کر دیں۔قبل ازیں مسٹر درانی اس کتاب کے حوالے سے جس سے یہ تنازعہ پیدا ہوا ہے اور کتاب میں ان سے جو باتیں منسوب کی گئی ہیں ان کی ذاتی طور پر وضاحت کرنے فوجی ہیڈ کوارٹر پہنچے ۔

واضح ہو کہ گذشتہ ہفتہ ہندوستان میں ”اسپائی کرونیکلز : را،آئی ایس آئی اور ایلژن آف پیس“ کے عنوان سے ایک کتاب کی نقاب کشائی کی گئی تھی ۔جس میں مسٹر دانی اور مسٹر دلات کے درمیان گفتگو کے اقتباسات ہیں۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Army to investigate former isi chief over claims in book in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply