افغان انٹیلی جنس افسر غیر قانونی طور پر سرحد پار کرنے پر پاکستان میں گرفتار

اسلام آباد: وزارت داخلہ کے مطابق افغان انٹیلی جنس کا ایک افسر یر قانونی طور پر سرحد پار کرتے ہوئے بلوچستان کے چمن میں گرفتار کر لیا گیا۔ وزارت نے کہا کہ یہ افغان افسر جس کا نام رضی خان ہے افغان فوج کے انٹیلی جنس یونٹ میں سکنڈ لیفٹننٹ کے عہدہ کا افسر ہے ۔ اسے وفاقی انٹیلی جنس ایجنسی (ایف آئی اے) کے افسروں نے مستند سفری دستاویزات کے بغیر ہی سرحد پار کر کے پاکستان میں داخل ہونے کے الزام میں چمن میں گرفتار کر لیا۔گرفتاری کے بعد ایف آئی اے نے اسے انٹیلی جنس ایجنسیوں کو سونپ دیا۔جنہوں نے اسے پوچھ گچھ کے لیے کسی نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا۔وزارت داخلہ نے مزید کہا کہ انٹیلی جنس ایجنسیاں فی الحال پکڑے گئے افغان افسر سے تحقیقات کر رہی ہیں اس لیے تفسیل کا علم نہیں ہو سکا۔ اس ماہ کے اوائل میں افغانستان کی سب سے بڑی جاسوس ایجنسی افغان نیشنل ڈائریکٹوریٹ آف سیکورٹی کے لیے کام کرنے والا ایک جاسوس پہلے ہی چمن میں فرنٹئیر کور کے ہاتھوں گرفتار کیا جاچکا ہے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Afghan intelligence officer arrested in chaman for crossing border illegally in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply