پولس فائرنگ میں شیر خوار بچے کی موت کے معاملہ میں مزید دو پولس اہلکار گرفتار

کراچی: شہر کے یونیورسٹی روڈ پر مسلح غنڈوںاور پولس کے درمیان مسلح تصادم میں ایک شیر خوار بچے کی ہلاکت کے معاملہ میں مزید دو پولس اہلکاروں کو گرفتار کر لیا گیا۔

دو پولس اہلکاروں کو ایک ڈیڑھ سالہ بچے کی، جو اپنے والدین کے ساتھ ایک رکشہ میں جا رہا تھا،موٹر سائیکل سوار غنڈوں پر فائرنگ کرنے والے پولس اہلکاروں کی گولی لگنے سے موت ہو جانے کے بعد کل ہی حراست میں لے لیا گیا تھا۔

پولس اہلکاروں نے بتایا کہ انہیں خبر ملی تھی کہ مشتبہ رہزن صفورہ گوتھ پر ڈیرہ جمائے بیٹھے ہیں جہاں ایک شخص نے اپنے لٹنے کی شکایت درج کرائی تھی۔پولس کو دیکھتے ہی وہ رہزن موٹر سائیکل پر سوار ہو کر فرار ہونے لگے ۔

پولس نے ان کا تعاقب کیا اور ساتھ ہی فائرنگ بھی کرتی رہی۔اسی اثنا میں ادھر سے ایک رکشہ گذرا اور کچھ گولیاں رکشے میں سوار ایک جوڑے کی گود میں بیٹھے ڈیڑھ سالہ بچے کو لگیں جو شدید زخمی ہو گیا۔ اسے فوراً اسپتال لے جایا گیا لیکن وہ راستے میں ہی زخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ گیا۔لیکن بچے کے والدین محفوظ رہے۔

بچے کی شناخت محمد احسن شیخ کے طور پر کی گئی ہے۔بچے کے گھر والوں کا کہنا ہے کہ پولس والے ان کے رکشے کے بہت قریب تھے اور اتنی زبردست فائرنگ کر رہے تھے کہ علاقہ میں خوف و ہراس کی لہر دوڑ گئی۔

بچے کے والد نے کہا کہ پولس والوں نے اتنی بھی زحمت نہیں کی کہ ایک کمرشیل علاقہ میں فائرنگ کرنے سے پہلے راہگیروں کو روک دیتے یا ہوشیار ہی کر دیتے۔ایڈیشنل انسپکٹر جنرل کراچی امیر شیخ نے کہا کہ کانسٹبل امجد کی بندوق سے فائرنگ کی گئی جبکہ پولس اہلکاروں کی شناخت عبد الصمد، خالد اور پیارو کے طور پر کی گئی ہے۔

یہ سب جائے وقوعہ پر تھے۔امیر شیخ کے مطابق ان چاروں پولس اہلکاروں کا اسلحہ ضبط کر لیا گیا اور انہیں ان کے ریمانڈ کے لے عدالت میںپیش کیا جائے گا۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: 2 more cops arrested in karachi over infants death in cross fire with suspected muggers in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.