سعودی شاہ سلمان نے فوج اور فضائیہ کے سربراہان کو برطرف کر دیا

ریاض: سعودی عرب نے ایک شاہی فرمان کے ذریعہ چیف آف اسٹاف سمیت چوٹی کے فوجی کمانڈروں کو برطرف کر دیا ہے۔ سعودی عرب کی سرکاری پریس ایجنسی نے یہ خبر جاری کی ہے مگر اس میں ان برطرفیوں کی کوئی وجہ بیان نہیں کی گئی ۔
اس دوران کچھ سیاسی تقرریاں بھی عمل میں آئی ہیں۔شاہ سلمان نے صوبہ الجوف کے گورنر کو برطرف کر دیا ہے اور ان کی جگہ شہزادہ بندر بن سلطان کو الجوف کا نیا گورنر مقرر کیا ہے۔
شاہی فرمان کے مطابق لیفٹیننٹ جنرل فہد بن ترکی جوائنٹ فورسز کے کمانڈر تعینات کیے گئے ہیں۔ ایئر فورس کے چیف آف اسٹاف اور کمانڈر کو رٹائر کر دیا گیا ہے۔
فیاض الروائیلی سعودی ایئرفورس کے چیف آف اسٹاف جبکہ ڈاکٹر خالد البیراری اسسٹنٹ ڈیفنس سیکریٹری مقرر کیے گئے ہیں۔شاہی فرمان میں کہا گیا ہے کہ شہزادہ فیصل بن فہد بن مقرن صوبہ حائل کے ڈپٹی گورنر ہوں گے۔
ڈاکٹر تمید ارالرمرہ نائب وزیر محنت بنائے گئے ہیں۔ عبدالرحمن بن صالح البنیان کو شاہی دربار کا مشیر بنایا گیا ہے، ان کا عہدہ جنرل کے برابر ہو گا۔شاہی فرمان کے مطابق وزارت دفاع میں بہتری کے لیے ترقیاتی پیکیج کے مسودے کی منظوری دی گئی ہے۔

Title: saudi king replaces military chiefs in shake up | In Category: خبریں  ( news )

Leave a Reply