سعودی عرب یمن میں اپنے جرائم کی پردہ پوشی کے لیے ایران پر بے بنیاد الزام لگارہا ہے:ایرانی سفارتکار

نیو یارک: اقوام متحدہ میں ایران کے مستقل مندوب غلام علی خوش رو نے کہا ہے کہ گذشتہ تین سال سے سعودی عرب یمن پر بمباری کر رہا ہے جس سے یمن کے لوگوں کو سوائے تباہی،خونریزی،بھوک و افلاس اور بیماریوں کے کچھ نہ ملا۔
نیو یارک میں میڈیا کے نمائندوں سے انہوں نے یہ بات اقوام متحدہ سے سعودی عرب کی اس شکایت کے جواب میں کہی جس میں سعودی عرب نے الزام لگایا تھا کہ یمن سے سعودی عرب کے شہروں کو نشانہ بنا کر حال ہی میں جو میزائل داغے گئے تھے وہ یمن میں حوثی قبائلیوں کو ایران نے سعودی عرب پر حملے کرنے کے لیے دیے تھے۔
خوشرو نے کہا کہ سعودی عرب یمن میں اپنے جرائم کی پردہ پوشی کرنے کے لیے ایران پر بے بنیاد الزامات عائد کرتا رہتا ہے۔ ایران نے سعودی عرب کے بے بنیاد دعوے کو خارج کر دیا اور کہا کہ یمن کا بحران دور کرنے کا راستہ صرف سیاسی حل ہے۔
خوشرو نے کہاکہ یمن میں اپنی شکست کو چھپانے کےلیے اس کا ایران مخالف مکتوب لکھنا کوئی نئی بات نہیںہے ۔عالمی برادری حقیقت سے واقف ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہاکہ سعودی عرب کو یمنیوں کے حقوق کا احترام کرنا چاہیے اور اس سے تعمیری مذاکرا ت کرنے چاہئیں۔

Title: saudi arabia must stop warmongering iran un envoy | In Category: خبریں  ( news )

Leave a Reply