سیکورٹی فورسز سے مسلح تصادم میں حزب المجاہدین کے دو انتہا پسند مارے گئے

سری نگر: شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ میں ہونے والے ایک شدید مسلح تصادم میں حزب المجاہدین کے دو مقامی انتہا پسند مارے گئے۔ سرکاری ذرائع نے یو این آئی کو مسلح تصادم کی تفصیلات فراہم کرتے ہوئے بتایا کہ ضلع بارہمولہ کے پزلپورہ رفیع آباد میں انتہا پسندوں کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع ملنے پر 22 راشٹریہ رائفلز کے فوجیوں ، جموں وکشمیر پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ اور سینٹرل ریزرو پولیس فورس نے گذشتہ رات مذکورہ علاقہ میں مشترکہ تلاشی آپریشن شروع کیا۔
انہوں نے بتایا کہ جب سیکورٹی فورسز مذکورہ علاقہ میں ایک مخصوص جگہ کامحاصرہ کر رہے تھے تبھی وہاں موجود انتہا پسندں نے ان پر فائرنگ شروع کی اور سیکورٹی فورسز کی جانب سے جوابی فائرنگ کئے جانے کے بعد طرفین کے مابین باضابطہ طور پر تصادم کا آغاز ہوا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا ’اندھیرے کی وجہ سے گذشتہ رات آپریشن کو روک دیا گیا تھا، البتہ انتہا پسندوں کو فرار ہونے سے روکنے کے لئے علاقے کو چاروں اطراف سے سخت محاصرے میں رکھا گیا تھا‘۔
انہوں نے بتایا کہ بدھ کی صبح روشنی کی پہلی کرنوں کے ساتھ ہی آپریشن بحال کردیا گیا اور طرفین کے مابین گولہ باری کے تبادلے میں دو انتہا پسند مارے گئے جن کی شناخت باسط احمد ساکن پٹن اور گلزار احمد ساکن سوپور کے طور پر کی گئی ہے۔ سیکورٹی ذرائع نے بتایا کہ ہلاک ہونے والے انتہا پسندوں کے قبضے سے بھاری مقدار میں اسلحہ وگولہ بارود برآمد کیا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ برآمدگی میں دو اے کے رائفلیں، دو دستی گرینیڈ ، 6 میگزینیں اور ایک پاؤچ شامل ہے۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Two hizbul militants killed in kashmir encounter in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply