ایس پی وید کوجموں و کشمیر کے پولس سربراہ کے عہدے سے ہٹا دیا گیا

سری نگر: اہم انتظامی اختیارات سے محروم کیے جانے پر جموں و کشمیر کے پولس سربراہ اور مرکزی حکومت کے درمیان شدید اختلافات ہوجانے کے بعد پولس سربراہ ایس پی وید کو ان کے عہدے سے برطرف کردیا گیا۔ جموں و کشمیر پولس اہلکاروں کے اغوا شدہ افراد خاندان کی رہائی کے عوض ایک دہشت گرد کے باپ کی رہائی کو اس برطرفی کا محرک بتایا جا رہا ہے۔

مسٹر وید کی جگہ جیل کے ڈائریکٹر جنرل دلباغ سنگھ کو ریاستی پولس کا سربراہ مقرر کیا گیا ہے۔واضح ہوکہ گذشتہہفتہ جنوبی کشمیر میں تین پالس اہلکاروں او پولس اہلکاروں کے8رشتہ داروں کو دہشت گردوں نے اغوا کر لیا تھا۔

لیکن کچھ گھنٹے بعد جب پولس نے دہشت گردوں کے درجن بھر گھر والوں کو جس میں حزب المجاہدین کے کمانڈر ریاض نائکو کے والد بھی شامل تھے،خاموشی سے رہا کردیا تو یہ اغواشدگان بھی رہا ہو گئے۔

وزارت داخلہ کے ذرائع نے بتایا کہ دہشت گردوں کی رہائیسے جموں و کشمیر پولس میں نیچے سے اوپر تک کے اہلکاروں کا مورال ڈاؤن ہوگا۔اس میں یہ بھی کہا گیا کہ محکمہ کے اعلیٰ افسران اس کا اندزہ نہیں کیا کہ اس فیصلے کے کتنے مضر اثرات مرتب ہو سکتے ہیں۔

1987بیچ کے آئی پی ایس افسر مسٹر وید کے خلاف محکمہ جاتی کارروائی کوئی نئی نہیں ہے اس سے پہلے بھی ان کو 2000میں بھی پولس بھرتی گھپلے میں ملوث پائے جانے پر اننت ناگ کے ڈپٹی انسپکٹر جنرل کے عہدے سے معطل کیا جاچکا ہے۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Sp vaid removed as jammu and kashmir police chief in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply