کشمیر میں 61ویں روز بھی معمولات زندگی درہم برہم رہے

سری نگر: (یو ا ین آئی) وادی کشمیر جہاں سیکورٹی فورسز اور ریاستی پولیس کی کاروائی میں تاحال 75 عام شہری ہلاک جبکہ 8 ہزار دیگر زخمی ہوگئے ہیں وہیںمعمولات زندگی بھی بدھ کو مسلسل 61 ویں روز بھی مفلوج رہے۔
علیحدگی پسند قیادت سید علی گیلانی، میرواعظ مولوی عمر فاروق اور محمد یاسین ملک نے اپنے احتجاجی کلینڈر میں لوگوں سے آج قومی شاہراہ پر جموں کے بانہال اور شمالی کشمیر کے سلام آباد اوڑی تک صبح گیارہ بجے سے سہ پہر چار بجے تک جمعہونے کے لئے کہا تھا۔
اور لوگوں سے ظہر کی نماز سڑکوں پر ادا کرنے کے لئے بھی کہا تھا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ قومی شاہراہ پر کسی بھی احتجاجی مظاہرے کو روکنے کے لئے سیکورٹی فورسز اور ریاستی پولیس کے اہلکاروں کی اضافی نفری تعینات کی گئی ہے۔
انہوں نے بتایا کہ اگرچہ وادی کے کسی بھی علاقہ میں آج کرفیو نافذ نہیں ہے، تاہم احتیاطی اقدام کے طور پر دفعہ 144 سی آر پی سی کے تحت چار یا اس سے زیادہ افراد کے ایک جگہ جمع ہونے پر پابندی عائد رکھی گئی ہے۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Shutdown restrictions continue in kashmir in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply