کشمیر میں عید پر ریل اور کاروان امن بس سروس معطل رہی،عید گاہوں اورامام بارگاہوں میں امن کی دعائیں

سری نگر: وادی کشمیر میں عیدالفطر کی تقریب سعید انتہائی مذہبی جوش و خروش اور تزک و احتشام کے ساتھ منائی گئی۔ تاہم موصولہ اطلاعات کے مطابق نماز عیدین کے اجتماعات کے بعد قریب ایک درجن مقامات پر آزادی حامی لوگوں اور سیکورٹی فورسزکے مابین پرتشدد جھڑپیں ہوئیں۔ ان جھڑپوں میں قریب دو درجن افراد بشمول سیکورٹی فورس اہلکاروں کے زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں۔ وادی میں پیر کے روز عیدالفطر کے پیش نظر ریل سروس کے ساتھ ساتھ دارالحکومت سری نگر اور پاکستانی مقبوضہ کشمیر کے دارالحکومت مظفرآباد کے درمیان چلنے والی ہفتہ وار ’کاروان امن‘ بس سروس معطل رہی۔ اس دوران وسطی ضلع بڈگام کے کرمشورہ میں ایک 17 سالہ نوجوان منیر احمد بٹ مقامی عیدگاہ میں شامیانہ نصب کرنے کے دوران کرنٹ لگنے سے جاں بحق ہوگیا۔
سرکاری ذرائع نے تاہم بتایا کہ بیشتر مقامات پر نماز عیدین کے اجتماعات پرامن طور پر اختتام کو پہنچے۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق عیدالفطر یا چھوٹی عید کے اس سلسلے میں وادی کے طول وعرض کی مساجد، عیدگاہوں اور امام بارگاہوں میں عیدین کی دوگانہ نماز کے روح پرور اجتماعات منعقد ہوئے۔ عیدالفطر کے ان روح پرور اجتماعات میں وادی میں مکمل امن وامان کی بحالی، ترقی اور خوشحالی کے لئے خصوصی دعائیں مانگی گئیں۔ وادی کشمیر میں نماز عید کے لیے سب سے بڑے اجتماع پائین شہر میں واقع تاریخی عیدگاہ اور شہرہ آفاق جھیل ڈل کے کناروں پر واقع درگاہ حضرت بل میں منعقد ہوئے جہاں لاکھوں فرزندگان توحید نے نماز عید ادا کی۔ تاہم انتظامیہ نے نامعلوم وجوہات کی بنا پر سیول لائنز کے ٹی آر سی گراؤنڈ اور پائین شہر کے رڈپورہ میں نماز عید کے اجتماعات کے انعقاد کی اجازت نہیں دی۔.جمعیت اہلحدیث جموں وکشمیر کے ایک ترجمان نے بتایا ’جمعیت برس ہا برس سے ٹی آر سی گراؤنڈ میں باوقار طریقے سے پر نماز عید ادا کرتی چلی آرہی ہے لیکن پچھلے برس کی طرح اس سال بھی یہاں اس اجتماع کے انعقاد پر پابندی عائد کی گئی‘۔
یہ بات یہاں قابل ذکر ہے کہ ٹی آر سی گراؤنڈ تاریخی لال چوک سے محض ایک کلو میٹر کی دوری پر واقع ہے۔ جموں وکشمیر کی وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے نماز عیدین سونہ وار میں زیارت شریف میر سید یعقوب صاحب (رح) کی مسجد میں ادا کی۔ محترمہ مفتی نماز کی ادائیگی کے فوراً بعد لوگوں بالخصوص خواتین نمازیوں کو عید کی مبارکباد پیش کرتی ہوئی نظر آئیں۔ وادی میں نماز عیدین کے اجتماعات میں خطبا و علما کرام نے عید الفطر کی اہمیت، فضیلت اور فضائل بیان کرنے کے ساتھ ساتھ مسلمانوں کے درمیان اتحاد اور یکجہتی پر زور دیا۔ حریت کانفرنس (ع)کے چیئر مین اور متحدہ مجلس جموں وکشمیر کے امیر میرواعظ مولوی عمر فاروق جنہیں سری نگر کے تاریخی عیدگاہ میں نماز ادا کرنی تھی ، کو عیدالفطر کے موقعے پر ایک بار پھر اپنی رہائش گاہ میں نظر بند رکھا گیا۔ تاہم انہوں نے نماز عید کے اس بھاری اجتماع سے ٹیلی فون پر خطاب کیا۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Rail and karvan e aman bus to pok suspended in view of eid ul fitr in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply