کشمیر میں مظاہرین پر سیکورٹی فورسز کی فائرنگ میں مزید ایک ہلاک، 30 زخمی

سرینگر:(یو این آئی) وادی کشمیر میں مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے سیکورٹی فورسز نے آنسو گیس کے گولے داغے اور فائرنگ کی جس سے ایک شخص ہلاک اور 30 دیگر زخمی ہو گئے۔
سیکورٹی فورسیز کی مبینہ حراست میں رہنے والے لیکچرر شبیر احمد مونگا کی موت سے کشمیر میں تشدد میں مرنے والوں کی 66 ہوگئی ہے۔ جنوبی کشمیر کے اننت ناگ ضلع میں 8جولائی کو سیکورٹی فورسز کے ساتھ تصادم میں حزب مجاہدین کے اعلی کمانڈر برہان وانی اور دو دیگر جنگجوؤں کی ہلاکت کے بعد سے ہی کشمیر میں تشدد کا دور جاری ہے، جس کی وجہ سے 9جولائی سے ہی کشمیر کے شہرخاص اور پرانے علاقے میں کرفیو جیسی سخت پابندیاں نافذ ہیں۔
ایک پولیس ترجمان نے مونگا کی موت کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ پولیس نے مقدمہ درج کرکے تحقیقات شروع کر دی ہے۔ترجمان نے بتایا کہ شاراشالی گاؤں میں 17 اور 18 اگست کی رات کو پتھراؤ کے واقعہ کے بعد فوج اور مقامی لوگوں کے درمیان ہوئی جھڑپ میں شبیرکی موت ہو گئی جبکہ چار دیگر زخمی ہو گئے۔
پولیس نے اس معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے تحقیقات شروع کر دی ہے۔فوج نے کانٹریکٹ لیکچرر مونگا کی موت پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے اس معاملے کی تحقیقات کا حکم دیا ہے۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: One more killed in kashmir firing in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News
Tags:

Leave a Reply