عالم اسلام کی موجودہ صورتحال کیلئے او آئی سی اور دیگرسلامی ممالک یکساں طور پر ذمہ دار: میرواعظ

سری نگر: حریت کانفرنس (ع) چیئرمین اور متحدہ مجلس علماء جموں وکشمیر کے امیر میرواعظ مولوی عمر فاروق نے عالم اسلام کی موجودہ صورتحال کو پوری مسلم امہ کے لئے انتہائی کرب ناک اور پریشان کن قرار دیتے ہوئے اسلامی ممالک کی تنظیم او آئی سی اور سعودی عرب ، ایران ، اور پاکستان جیسے ذمہ دار اسلامی ممالک سے دردمندانہ اپیل کی کہ وہ مسلک و مشرب سے بالا تر ہوکر ملت اسلامیہ کو اس موجودہ خلفشار اور تکلیف دہ صورتحال سے نکالنے کے لئے آگے آئیں۔
سری نگر کی تاریخی و مرکزی جامع مسجد میں نماز جمعہ سے قبل ایک بھاری اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے میرواعظ نے کہا کہ عالم اسلام کی موجودہ صورتحال کے لئے او آئی سی اور دیگر ذمہ دار اسلامی ممالک یکساں طور ذمہ دار ہیں اور اگر وہ اس صورتحال کا ادراک کرتے ہوئے اب بھی ان حالات کے سدباب کے لئے آگے نہیں آتے تو یہ پوری ملت اسلامیہ کے لئے سب سے بڑا المیہ ہوگا۔
انہوں نے مقدس شہر مدینہ طیبہ میں حالیہ دہشت گردانہ حملے کو انتہائی بزدلانہ اور وحشیانہ حرکت قرار دیتے ہوئے کہا کہ مسلمان سب کچھ برداشت کرسکتا ہے لیکن مقامات مقدسہ کی بے حرمتی برداشت نہیں کرسکتا۔ میرواعظ نے کہا کہ عراق، شام، یمن ، افغانستان، پاکستان اور دیگر اسلامی ممالک میں جو صورتحال ہے اور اب جس طرح حرمین شریفین کو نشانہ بنانے کی باتیں کی جارہی ہیں ایسے میں اگر مسلم قیادت خواب غفلت سے بیدار نہیں ہوتی اور آپسی چپقلش اوراختلافات کو بھلا کر حرمین شریفین کی حفاظت کے لئے متحدہ اقدامات نہیں کرتی تویہ عالم اسلام کی انتہائی بدقسمتی ہوگی۔(یو این آئی)

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Oic and islamic countries are responsible for islamic worlds condition in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply