یاسین ملک کی رہائی کے مطالبے میں سری نگر میں جزوی ہڑتال

سری نگر:جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ (جے کے ایل ایف) کے چیئرمین محمد یاسین ملک کی فوری رہائی کے مطالبے کو لیکر دارالحکومت سری نگر کی سیول لائنز کے کئی علاقوں میں جمعہ کو ہڑتال رہی جس دوران دکانیں اور تجارتی مراکز بند رہے۔
جے کے ایل ایف کا گڑھ سمجھے جانے والے مائسمہ، ریڈ کراس روڑ، حاجی مسجد روڑ، گاؤکدل، مدینہ چوک ، ککر بازار اور اس سے ملحقہ علاقوں میں دکانیں اور تجارتی مراکز بند رہے۔ تاہم اِن علاقوں میں سڑکوں پر گاڑیوں کی آمد ورفت معمول کے مطابق رہی۔ شہر کے دوسرے علاقوں بشمول تاریخی لال چوک میں کاروباری سرگرمیاں معمول کے مطابق جاری تھیں۔
فرنٹ چیئرمین یاسین ملک جنہیں 20جون کو سری نگر کے بٹ مالو بس اسٹینڈ سے گرفتار کرنے کے بعد سر ی نگر سینٹرل جیل منتقل کردیا گیا تھا، کو بدستور جیل میں بند ہیں۔فرنٹ کے ایک ترجمان نے بتایا کہ پچھلے تین دن سے ان کے وکلاء مسلسل تحصیل دار جنوبی سری نگر کی عدالت سے رجوع کر رہے ہیں لیکن تحصیل دار لیت و لعل سے کام لیتے ہوئے کسی نہ کسی بہانے کیس کو ٹال رہے ہیں۔
ترجمان نے کہا کہ انہیں نہ کسی تحصیل دار نہ کے اور نہ ہی کسی مجسٹریٹ کے پاس پیش کیا گیا لیکن حیران کن طور پر تحصیل دار جنوبی سری نگر نے سینٹرل جیل منتقل کرنے کے احکامات صادر کرتے ہوئے اپنے حکم نامے میں لکھا ہے کہ’ یاسین ملک کو ان کی عدالت میں پیش کیا گیا اور انہوں نے رہائی کے لئے ضمانتی بانڈ دینے سے انکار کیا جس وجہ سے انہیں سینٹرل جیل سری نگر منتقل کیا جاتا ہے‘ سفیدجھوٹ اور بدنیتی پر مبنی ہے۔
تحصیل دارکا یہ حکمنامہ ثابت کررہا ہے کہ یہاں کے تحصیل دارعملاًپولیس تھانہ داروں کی ما تحتی میں کام کرتے ہیں اور انہیں سے احکامات لیتے پھرتے ہیں۔(یو این آئی)

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: normal life hit in srinagar due to strike call in Urdu | In Category: کشمیر  ( kashmir ) Urdu News

Leave a Reply