کشمیر میں پھر ہڑتال ،روز مرہ کے معمولات بری طرح متاثر،سڑکوں وبازاروں میں سناٹا

سری نگر:علیحدگی پسند قیادت سید علی گیلانی، میرواعظ مولوی عمر فاروق اور محمد یاسین ملک کی طرف سے ہڑتال میں دی گئی دو روزہ ڈھیل ختم ہونے کے بعد وادی بھر میں پیر کو معمول کی زندگی ایک بار پھر تھم گئی۔
اس دوران سری نگر کے پائین شہر میں واقع تاریخی جامع مسجد کے باب الداخلے ایک بار پھر مقفل کئے گئے ہیں اور پیر کی صبح کسی بھی شہری کو مسجد کے احاطے میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دی جارہی تھی۔ اس تاریخی جامع مسجد کے اردگرد سینکڑوں کی تعداد میں ریاستی پولیس اور سیکورٹی فورسز کے اہلکار بدستور تعینات رکھے گئے ہیں۔ پولیس نے بتایا کہ وادی کے کسی بھی حصے میں کرفیو یا پابندیاں نافذ نہیں کی گئی ہیں، البتہ امن وامان کی صورتحال کو بنائے رکھنے کے لئے مختلف علاقوں میں سیکورٹی فورسز کی اضافی نفری بدستور تعینات رکھی گئی ہے۔
سری نگر کی سڑکیں جن پر ہفتہ اور اتوار کو گاڑیوں کا سیلاب امڈ آیا تھا، پیر کو ایک بار پھر سنسان نظر آئیں۔ تاہم اکادکا مسافر و نجی گاڑیاں چلتی ہوئی نظر آئیں۔ .سری نگر کے سیول لائنز کے مختلف علاقوں بشمول تاریخی لال چوک، ہری سنگھ ہائی اسٹریٹ، گونی کھن، ریذیڈنسی روڑ، مولانا آزاد روڑ، مہاراجہ بازار، بتہ مالو ، اقبال پارک، ڈلگیٹ، ریگل چوک اور بڈشاہ نگر میں پیر کو سبھی دکانیں بند نظر آئیں۔
پبلک ٹرانسپورٹ جو ہفتہ کو 133 دنوں بعد سڑکوں پر نمودار ہوا تھا ایک بار پھر سڑکوں سے غائب رہا۔ ایسی ہی صورتحال بالائی شہر میں نظر آئی جہاں دکانیں اور تجارتی مراکز بند رہے جبکہ سڑکوں پر پبلک ٹرانسپورٹ کی آمد و رفت معطل رہی۔ تاہم نجی گاڑیوں کی ایک اچھی خاصی تعداد سڑکوں پر چلتی ہوئی نظر آئیں۔
وادی میں 8 جولائی کو حزب المجاہدین کما نڈر برہان وانی کی ہلاکت کے بعد سے ہفتہ وار احتجاجی کلینڈر جاری کررہے مسٹر گیلانی، میرواعظ اور یاسین ملک نے گذشتہ ساڑھے چار ماہ میں پہلی مرتبہ ہڑتال میں دو دنوں کی ڈھیل کا اعلان کیا تھا۔ تاہم ہڑتال میں 21 اور 22 نومبر کو کوئی ڈھیل نہیں ہوگی۔ وادی کے دوسرے علاقوں سے بھی ہڑتال کی اطلاعات موصول ہوئیں۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Normal life again disrupted in the valley in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply