علیحدگی پسند لیڈروں کی گرفتاری کے خلاف ایک روزہ جزوی ہڑتال کے بعد معمولات زندگی بحال

سری نگر:وادی کشمیر میں قومی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے) کے ہاتھوں 7 علیحدگی پسند لیڈران کی گرفتاری کے خلاف ایک روزہ ہڑتال کے بعد بدھ کے روز معمولات زندگی بحال ہوگئے۔ ہڑتال کی کال علیحدگی پسند قیادت سید علی گیلانی، میرواعظ مولوی عمر فاروق اور محمد یاسین ملک نے دی تھی۔ سری نگر کے پائین شہر کے بیشتر حصوں میں منگل کو عائد کردہ پابندیاں ہٹالی گئیں جبکہ جموں خطہ کے بانہال اور شمالی کشمیر کے بارہمولہ کے درمیان چلنے والی ریل خدمات بحال کردی گئیں۔
سرکاری ذرائع نے یو این آئی کو بتایا ’پائین شہر کے کسی بھی علاقہ میں آج کوئی پابندیاں نافذ نہیں ہیں‘۔ یو این آئی کے ایک نامہ نگار جس نے بدھ کی صبح پائین شہر کے مختلف علاقوں کادورہ کیا، نے بتایا کہ سڑکوں پر جو رکاوٹیں منگل کی صبح کھڑی کی گئی تھیں، کو ہٹالیا گیا ہے۔
انہوں نے بتایا کہ نوہٹہ میں واقع تاریخی و مرکزی جامع مسجد کی طرف جانے والی تمام سڑکوں سے بھی رکاوٹیں ہٹالی گئی ہیں۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق پائین شہر میں بدھ کی صبح دکانیں اور تجارتی مراکز کھل گئے، جبکہ سڑکوں پر گاڑیوں کی آمدورفت بحال ہوئی۔ سرکاری دفاتر، بینکوں اور دیگر مالیاتی اداروں میں معمول کا کام کاج بحال ہوگیا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ پائین شہر کے پانچ پولیس تھانوں نوہٹہ، ایم آر گنج، صفا کدل، خانیار اور رعناواری کے تحت آنے والے علاقوں میں پابندیاں شہر میں امن وامان کی صورتحال کو بنائے رکھنے کے لئے نافذ کی گئی تھیں۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Life returns to normal in kashmir after one day shutdown in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News
Tags: ,

Leave a Reply