وادی کشمیر میں 122 ویں روزبھی عام زندگی مفلوج رہی

سری نگر:وادی کشمیر میں پیر کو ہڑتال کے باعث معمولات زندگی مسلسل 122 ویں روز بھی مفلوج رہے اس دوران علم ہوا ہے کہ علیحدگی پسند رہنما آئندہ کا لائحہ عمل ترتیب دینے کے لئے منگل کو تمام متعلقہ پارٹیوں کے ساتھ تبادلہ خیال کرنے والے ہیں۔
وادی میں جاری احتجاجی تحریک کی قیادت کررہے علیحدگی پسند رہنماؤں سید علی گیلانی، میرواعظ مولوی عمر فاروق اور محمد یاسین ملک نے پہلے ہی ہڑتال میں 10 نومبر تک توسیع کا اعلان کر رکھا ہے۔ انہوں نے آج کشمیری عوام کو ’یوم تحفظ اسکول‘ منانے اور اسکولوں میں آتشزدگی کی پراسرار وارداتوں کے خلاف اپنے متعلقہ علاقوں میں واقع اسکولوں کی جانب مارچ کرنے کے لئے کہا تھا۔
خیال رہے کہ مستقبل کی حکمت عملی پر تبادلہ خیال کے لئے اتوار کو مسٹر گیلانی، میرواعظ اور یاسین ملک کے درمیان میٹنگ ہوئی جس میں آئندہ کا لائحہ عمل ترتیب دینے کے لئے مختلف انجمنوں جن میں تاجران، ٹرانسپوٹرس، اساتذہ، طلبا، سول سوسائٹی ، بار ایسی سیشن، دینی، سیاسی و سماجی جماعتوں، دانشوراں اور زندگی کے دوسرے طبقات سے تعلق رکھنے والے لوگوں کا ایک اجلاس منگل کو مسٹر گیلانی کی رہائش گاہ پر بلایا گیا۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Life remains paralysed for 122 consecutive day in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply