پاکستان کے یوم آزادی کے پیش نظر ’کاروان امن‘ بس سروس معطل

سری نگر: پاکستان میں 14 اگست کو 70 ویں یوم آزادی کی تقریبات اور تعطیل کے پیش نظر سری نگر اور پاکستانی مقبوضہ کشمیر کے دارالحکومت مظفرآباد کے درمیان چلنے والی ہفتہ وار ’کاروان امن‘بس کو پیر کے روز معطل کر دیا۔ سرکاری ذرائع کے مطابقہمیں مظفر آباد سے ایک پیغام موصول ہوا جس میں بتایا گیا کہ وہاں یوم آزادی پاکستان کے موقع پر عام تعطیل ہوتی ہے اور اس کے پیش نظر کاروان امن بس کو آج معطل کیا جائے‘۔ انہوں نے بتایا کہ دونوں طرف کی انتظامیہ نے باہمی اتفاق رائے کے بعد بس سروس کو آج معطل رکھنے کا فیصلہ لیا ہے۔
سرکاری ذرائع نے بتایا کہ جو مسافر آج اس ہفتہ واری بس سروس کے ذریعے سفر کرنے والے تھے، کو بس کی معطلی کے فیصلے سے آگاہ کیا گیا ہے اور انہیں اگلے ہفتے چلنے والی بس میں ایڈجسٹ کیا جائے گا۔ 1999 میں کرگل کی جنگ کے بعد ہندوستان اور پاکستان کے درمیان بڑے اعتماد سازی کے اقدام کے طور پر شروع کی گئی یہ بس سروس وادی میں سال 2008 ، 2010 اور 2016 کی طویل احتجاجی تحریکوں اور لائن آف کنٹرول پر کشیدگی کے باوجود جاری رہی۔ کاروان امن بس کا آغاز 7 اپریل 2005 کو ہوا تھا اور تب سے اِس کے ذریعے ہزاروں لوگ آرپار اپنے عزیز واقارب سے ملے ہیں۔
دریں اثنا جموں خطہ کے پونچھ سے ہر پیر کو چلنے والی پونچھ راولاکوٹ ’راہِ ملن‘ منگل کو مسلسل چھٹی مرتبہ معطل رہی۔ سرکاری ذرائع نے بتایا ’پونچھ راولاکوٹ بس جو کہ ہر پیر کو ضلع پونچھ اورپاکستانی مقبوضہ کشمیر کے ضلع راولاکوٹ کے درمیان چلتی ہے، کو چھ ہفتے قبل سرحدی کشیدگی کے پیش نظر احتیاطی اقدامات کے طور پر معطل کیا گیا تھا‘۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Karvan e aman bus not to operate today in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply