جے سی سی آئی نے روہنگیائی مسلمانوں کو جموں سے نکال باہر کرنے کے لیے حکومت کو ایک ماہ کی مہلت دی

جموں: (یو ا ین آئی) جموں چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز نے دھمکی دی ہے کہ اگر جموں میں مقیم روہنگیائی مسلمانوں کو ایک ماہ کے اندر شہر بدر نہیں کیا گیا تو وہ ان کے خلاف تشدد پر اتر آئیں گے۔ سی سی آئی جموں کے صدر راکیش گپتا نے جمعہ کو یہاں نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے کہا ’ہم روہنگیائی اور بنگلہ دیشی شہریوں کو جموں سے نکالنے کے لئے ریاستی اور مرکزی سرکار کو ایک مہینے کا وقت دیتے ہیں۔ اورہمارا یہ بھی مطالبہ ہے کہ جن کی زمین پر یہ لوگ رہائش پذیر ہیں، ان پر پبلک سیفٹی ایکٹ (پی ایس اے) کا اطلاق کیا جائے‘۔
انہوں نے دھمکی دیتے ہوئے کہا ’اگر حکومتیں ایسا کرنے میں ناکام ہوئیں تو چیمبر اس روہنگیائی کیمونٹی کے خلاف تشدد شروع کرے گی‘۔ چیمبر کے صدر نے جموں میں مقیم روہنگیائی کیمونٹی پر منشیات کی اسمگلنگ کا الزام لگاتے ہوئے ریاست کے لئے بڑھتا ہوا خطرہ قرار دیا۔ انہوں نے کہا ’ان لوگوں کو یہاں رہائش پذیر ہونے کی اجازت نہیں دی جاسکتی ، کیونکہ یہ دہشت گردوں کی حمایت بھی کرسکتے ہیں‘۔ مسٹر گپتا نے کہا ’ان (روہنگیائی مسلمانوں) کو ریاست سے باہر نکالنے کا مطالبہ سب سے پہلے ہم نے ہی کیا تھا۔ عوام کے مفادات کو تحفظ فراہم کرنا ہم اپنا فرض سمجھتے ہیں‘۔ انہوں نے کہا کہ آئین کی دفعہ 370 کے مطابق یہ روہنگیائی شہری یہاں رہائش اختیار نہیں کرسکتے ہیں۔
انہوں نے کہا ’ہمیں دفعہ 370 کی حفاظت کرنی ہے‘۔ مسٹر گپتا نے کہا ’ہم اس سیاسی بحث میں الجھنا نہیں چاہتے کہ ان لوگوں کو کس نے یہاں بسایا۔ لیکن جن لوگوں نے ایسا کیا ہے، کی شناخت ہونی چاہیے اوران کے خلاف کاروائی کی جانی چاہیے‘۔ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) اور پنتھرس پارٹی پہلے سے ہی ان روہنگیائی مسلمانوں کی جموں میں موجودگی کے خلاف برسرپیکار ہیں۔ خیال رہے کہ مرکزی وزارت داخلہ نے بھی ان روہنگیائی شہریوں کو جموں بدر کرنے کے طریقوں پر غور کرنا شروع کردیا ہے۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Jammu chamber of commerce wants to deport foreign settlers in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply