انیس ہفتوں بعدسری نگر کی تاریخی جامع مسجدمیں نماز جمعہ پڑھنے کی اجازت دی گئی

سری نگر : (یو ا ین آئی) 19 ہفتوں تک مقفل اور سیکورٹی فورسز کے محاصرے میں رہنے والی کشمیری عوام کی سب سے بڑی عبادت گاہ ’تاریخی و مرکزی جامع مسجد سری نگر‘ میں جمعہ کو نماز کی ادائیگی پر عائد غیراعلانیہ پابندی ہٹالی گئی اور اس622 برس قدیم تاریخی مسجد میں سینکڑوں کی تعداد میں لوگوں نے نماز جمعہ اجتماعی طور ادا کی۔تاہم حریت کانفرنس (ع) چیئرمین اور متحدہ مجلس علماء جموں وکشمیر کے امیر میرواعظ مولوی عمر فاروق کو تاریخی جامع مسجد جانے کی اجازت نہیں دی گئی۔
خیال رہے کہ وادی میں 8 جولائی کو حزب المجاہدین کمانڈر برہان وانی کی ہلاکت کے ساتھ ہی جہاں اطراف واکناف میں سخت ترین کرفیو کا نفاذ عمل میں لایا گیا تھا، وہاں سیکورٹی فورسز نے اس تاریخی جامع مسجد کو سخت محاصرے میں لیکر اس کے باب الداخلے مقفل کردیے تھے۔ اگرچہ قریب 55 دنوں بعد کرفیو ہٹالیا گیا، تاہم تاریخی جامع مسجد کا محاصرہ جاری رکھتے ہوئے اس میں نماز کی ادائیگی پر قدغن جاری رکھی گئی تھی۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Friday prayer in srinagar mosque in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply