جموں وکشمیر میں انتہا پسندوں کے ساتھ مسلح تصادم میں ایک انتہا پسند ہلاک و تین فوجی شہید

سرینگر:جموں و کشمیر کے ضلع باندی پورا میں آج صبح سیکورٹی فورسز کے ساتھ زبردست انکاونٹر میں لشکر طیبہ کا ایک خطرناک انتہا پسند ہلاک اور فوج کے تین سپاہی شہید و 11سیکورٹی اہلکار زخمی ہو گئے۔ سرکاری ذرائع نے یہاں یہ اطلاع دی۔ تاہم وزارت دفاع کے ترجمان نے اس خبر کی تصدیق نہیں کی ہے۔ زخمی جوانوں کو بذریعہ طیارہ فوج کے کیمپ ہسپتال میں داخل کرایا گیا ہے جہاں بعض کی حالت نازک بتائی جاتی ہے جس سے ہلاک شدگان کی تعداد میں اضافہ کا خدشہ ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ باندی پورا کے ایک محلہ میں انتہا پسندوںکے ایک گروہ کے چھپے ہونے کی خفیہ معلومات کی بنیاد پر فوج اور ریاستی پولیس کی خصوصی مہم کی ٹیم کے جوانوں نے صبح صادق کے وقت علاقہ میں تلاشی مہم چلائی۔ اور جیسے ہی سیکورٹی فورسز کے جوانوں نے انتہا پسندوں کے ٹھکانوں کی جانب بڑھنا شروع کیا انتہا پسندوں نے خود کار رائفلوںسے فائرنگ اور دستی بم پھینکنے شروع کر دیئے۔
جسمیں مرکزی ریزرو پولیس فورس کے ایک سینئر افسر چیتن تھاپا سمیت 9جوان شدید زخمی ہو گئے جن میں سے تین نے بعد میں دم توڑ دیا۔ شہید ہوئے جوان کی شناخت روی کمار کے طور پر کی گئی ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ اندھیرے کی وجہ سے تلاشی مہم تھوڑی دیر کے لئے روک دی گئی اور انتہا پسندوںکے فرار کے تمام راستے بند کر دیے گئے۔سورج کی پہلی کرن کے ساتھ ہی جنگجوؤں کی تلاش پھر شروع کر دی گئی۔کارروائی شروع ہوتے ہی جنگجوؤں نے سیکورٹی فورسز کے جوانوں پر اندھا دھند فائرنگ شروع کر دی۔جوانوں کی جوابی کارروائی میں ایک جنگجو مارا گیا جس کی شناخت لشکر طیبہ کے مطلوب کمانڈر ابو حارث کے طور پر کی گئی ہے۔ فائرنگ میں ایک راہگیر بھی زخمی ہو گیا۔ 11زخمیوں میں چار فوج کے، ایک سی آر پی ایف کا اور چھ پولس اہلکار ہیں۔
واضح رہے کہ گذشتہ 12 فروری کو جنوبی کشمیر کے کولگام ضلع میں تصادم کے دوران چار جنگجو اور ایک شہری کے مارے جانے اور دو جوانوں کے شہید ہونے کے واقعہ سے بھی تازہ انکاؤنٹر کو جوڑ کر دیکھا جا رہا ہے۔کولگام میں تصادم کے دوران تین جوان زخمی بھی ہوئے تھے۔اس کے بعد کولگام اور اننت ناگ میں احتجاج کر رہے لوگوں کو منتشر کرنے کے لئے سیکورٹی فورسز کو آنسو گیس کے گولے بھی چھوڑنے پڑے تھے اور گولیاں بھی چلانی پڑی تھیں جس میں ایک شخص مارا گیا تھا اور کئی دیگر زخمی ہو گئے تھے۔ فوج نے شہید ہوئے جوانوں لانس نائک بھنڈوریا ،گوپال سنگھ منیم سنگھ اور سپاہی رگھوویر سنگھ کو بادامی باغ چھاؤنی میں پورے فوجی اعزاز کے ساتھ خراج عقیدت پیش کیا اور آخری رسومات کے لئے ان کے جسد خاکی کو ان کے آبائی شہر بھیج دیا۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Encounter in j ks bandipora 3 army soldiers die 1 militant killed in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply