ایل او سی پر کشیدگی کے باوجود کاروان امن بس سروس کی آمدو رفت جاری

سری نگر: وادی کشمیر اور لائن آف کنٹرول پر کشیدگی کے باوجود دارالحکومت سری نگر اور پاکستانی مقبوضہ کشمیر کے دارالحکومت مظفرآباد کے درمیان چلنے والی ہفتہ وار ’کاروان امن بس سروس‘ جاری رہی۔ شمالی کشمیر کے ضلع کپواڑہ میں ایل او سی پر گذشتہ دس دنوں کے دوران 10 انتہاپسند اور 3 فوجی اہلکار مارے گئے۔
سرکاری ذرائع نے ملک کے معروف خبر رساں ادارے یو این آئی کو بتایا کہ ہفتہ وار کاروان امن بس پیر کی علی الصباح اوڑی سیکٹر میں لائن آف کنٹرول (ایل او سی) کے اِس پار واقع کمان پوسٹ جو کہ ہندوستانی فوج کی آخری چوکی ہے، کی طرف روانہ ہوئی۔ اس ہفتہ وار بس سروس کا آغاز 7 اپریل 2005 کو ہوا تھا اور تب سے اِس کے ذریعے ہزاروں لوگ آرپار اپنے عزیز واقارب سے ملے ہیں۔
خیال رہے کہ فوج نے 27 مئی کو ضلع بارہمولہ کے اوڑی میں ایل او سی پر دراندازی کی ایک بڑی کوشش کو ناکام بناتے ہوئے بھاری اسلحہ سے لیس 6انتہا پسندوں کو ہلاک کیا۔

Title: carvan e aman bus service not affected | In Category: کشمیر  ( kashmir )

Leave a Reply