کشمیر میں سیکورٹی فورسز کے ساتھ شب بھر چلے تصادم میں تین انتہا پسند ہلاک

سری نگر: وسطی کشمیر کے ضلع بڈگام میں رات بھر جاری رہنے والے تصادم کے دوران تین انتہا پسند ہلاک ہو گئے اور جائے تصادم سے بھاری مقدار مٰن اسلحہ بارود برآمد کیا گیا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ضلع بڈگام کے ماگام علاقہ میں واقع رڈبگ نامی گاؤں میں کچھ انتہا پسندوں کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع ملنے پر سیکورٹی فورسز اور ریاستی پولیس نے مذکورہ گاؤں میں گذشتہ رات تلاشی آپریشن شروع کیا۔ تاہم جب سیکورٹی فورسز ایک مخصوص جگہ کی جانب پیش قدمی کررہے تھے تو وہاں موجو انتہاپسندوںنے ان پر فائرنگ کر دی۔
ذرائع نے بتایا کہ سیکورٹی فورسز نے جوابی فائرنگ کی جس کے بعد طرفین کے مابین باضابطہ طور پر جھڑپ کا آغاز ہوا۔ انہوں نے بتایا ’علاقہ میں انتہاپسندوں کی حمایت میں ہونے والے کسی بھی طرح کے مظاہروں کو روکنے کے لئے سیکورٹی فورسز کی اضافی نفری بلائی گئی تھی ۔ انہوں نے بتایا کہ مارے گئے جنگجوؤں کی شناخت معلوم کی جارہی ہے۔ دریں اثنا موصولہ اطلاعات کے مطابق رڈبگ میں تین انتہاپسندوں کے سیکورٹی فورسز کے محاصرے میں پھنسنے کی خبر پھیلتے ہی گذشتہ رات رڈبگ کے نذدیکی دیہات میں انتہاپسندوں کی حمایت میں مظاہرے شروع ہوئے۔
ان اطلاعات کے مطابق اگرچہ لوگوں نے جھڑپ کے مقام کی طرف پیش قدمی کی کوششیں کیں تاہم سیکورٹی فورسز نے ان کوششوں کو ناکام بنایا۔ اورضلع بھر میں موبائیل انٹرنیٹ خدمات معطل کردی گئیں۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ موبائیل انٹرنیٹ خدمات کی معطلی کا قدم کسی بھی طرح کی افواہ بازی کو روکنے کے لئے اٹھایا گیا ہے ۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Budgam encounter three militants killed arms and ammunition recovered in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply