امرناتھ یاتریوں پر حملہ میں لشکر طیبہ کا ہاتھ:کشمیر پولس سربراہ

سرینگر: جموں و کشمیر کے پولس انسپکٹر جنرل منیر خان نے کہا ہے کہ اننت ناگ میں امرناتھ یاتریوں پر دہشت گردانہ حملہ لشکر طیبہ کے دہشت گردوں نے کیا تھا اور اس میں پاکستانی دہشت گرد اسماعیل کا ذہن کار فرما تھا۔دہشت گردانہ حملہ اس وقت ہوا جب پیر کی شب یاتریوں سے بھری ایک بس امرناتھ گپھا سے واپس آرہی تھی۔کہا جاتا ہے کہ اس بس میں 60تا 70یاتری تھے جو جموں واپسی کے دوران یاتریوں کے پہلے بنیادی کیمپ بلتال سے آرہے تھے۔
نائب وزیر اعلیٰ نرمل سنگھ کے مطابق ہلاک شدگان کا تعلق گجرات سے تھا۔ ان سب کا جسد خاکی اور زخمیوں کو بذریعہ خصوصی طیارہ گجرات بھیج دیا گیا۔ اسی دوران حکومت گجرات نے زخمیوں کے لیے سورت کے کرن اسپتال میں ،جس کا حال ہی میں وزیر اعظم نریندر مودی نے افتتاح کیا تھا،علاج کا بندوبست کیا ہے۔حکومت گجرات نے ہلاک شدگان کے لواحقین کو فوری طور پر 5لاکھ روپے اور زخمیوں کو دو لاکھ روپے معاوضہ دینے کا اعلان کیاہے۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Attack on amaranth pilgrims carried out by let kashmir police in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News

Leave a Reply