تین لاکھ کشمیری طلبا کا تعلیمی سال برباد نہ ہونے دیاجائے: ملی رہنماؤں کی کشمیریوں سے اپیل

نئی دہلی:ہندوستان کے سرکردہ ملی رہنماؤں نے اہالیان کشمیر سے درخواست کی ہے کہ موجودہ تحریک کی وجہ سے کشمیر کے تین لاکھ بچوں کا تعلیمی سال برباد نہیں ہونا چاہئے۔
انہوں نے کشمیر میں اسکولوں کے جلنے کے واقعات پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ اسکولوں اور مدرسوں کے بغیر کوئی قوم ترقی نہیں کرسکتی ہے۔اسلام میں ابتدائے وحی ”اقرا“ (پڑھو) سے شروع ہوئی تھی اور تعلیم کی اتنی اہمیت ہے کہ جنگ بدر میں مسلمانوں کو صرف لکھناپڑھنا سکھانے والے قیدیوں کو آزاد کردیا گیا تھا۔
ملی رہنماؤں نے حریت، حکومت اور کشمیر کی سول سوسائٹی کو مشورہ دیا ہے کہ وہ مل کر اس بات کویقینی بنائیں کہ کشمیر کے بچوں کا تعلیمی سال نہ ضائع ہو اور جو طلبہ جیلوں میں بند ہیں ان کے امتحانات کا بھی انتظام کیا جائے۔
مزید برآں جو عناصر اسکولوں کو جلانے کا کام کرکے قوم کو جاہل رکھنا چاہتے ہیں ان کی نشاندہی ہو اور ان کو قرارواقعی سزاملے۔ملی رہنماؤں نے صوبائی اور مرکزی حکومت کو بھی مشورہ دیا کہ جلد از جلد حریت کانفرنس اور کشمیری سول سوسائٹی سے سنجیدہ مذاکرات شروع کرکے مسئلہ کشمیر کا پائیدارحل نکالیں۔

Read all Latest kashmir news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from kashmir and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Academic year of 3 lac kashmiri students should not be suffered in Urdu | In Category: کشمیر Kashmir Urdu News
Tags:

Leave a Reply