یو پی حکومت کومتھرا میں غیر قانونی قابضین کے خلاف کارروائی کرنا ہی تھی تو بہت پہلے کر لینی چاہئے تھی:نتیش کمار

پٹنہ:بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار نے اتر پردیش کے شہر متھرا میں پولیس اور مظاہرین کے درمیان مسلح تصادم پرنہایت حیرت ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ جواہر باغ میں غیر قانونی طور پر قبضہ کرنے والوںکے خلاف پہلے ہی کارروائی ہونی چاہیے تھی۔تاکہ معاملہ اتنا نہیں بڑھتا کہ اتنے لوگوں اور دو پولس افسروں کو جان سے ہا تھ دھونا پڑتا۔
اتوار کے روز یہاں جنتا دل یونائیٹڈ(جے ڈی یو) کے صوبائی دفتر میں اپنی پارٹی کی رکنیت کی ملک گیر مہم کے آغاز کے بعد میڈیا کے نمائندوں سے بات کرتے ہوئے نتیش نے متھرا سانحہ پر کہا کہ ایسی کارروائی کا کوئی تصور بھی نہیں کر سکتا انہیں اس پر سخت حیرت ہے کہ کوئی اتنے عرصہ سے حکومتی اراضی پرکیسے جبراً قابض رہ سکتا ہے۔
انہوں نے یہ بھی کہا کہ انہیں توان کے مطالبات پر بھی حیرت ہے یہ غیر قانونی قبضہ ختم کرانے کی بہت پہلے ہی کارروائی ہوجا نا چاہیے تھی تاکہ ان کا اتنا حوصلہ نہ بڑھ پاتا۔ یاد رہے کہ متھرا کے جواہرباغ میں گزشتہ 2 جون کو پولیس اور غاصبانہ طور پر قابض رہائشیوں کے درمیان ہونے والے خونریز تصادم میں ایک ایس پی اور ایک ایس ایچ او سمیت 29افراد ہلاک ہوئے تھے۔
نتیش نے جے ڈی یو رکنیت کے لیے اتوار سے شروع ہونے والی مہم کے بارے میں بتایا کہ پارٹی رہنماو¿ں اور کارکنوں نے اپنے علاقوں میں اس مہم کا آغاز کیا ہے۔اس موقع پر موجود جے ڈی یو کے ریاستی صدر وششٹھ نارائن سنگھ نے بتایا کہ اس مہم کے دوران بہار میں 50 لاکھ ممبر بنائے جانے کا ہدف رکھا گیا ہے.
انہوں نے قومی سطح پر جے ڈی یو نے کتنے رکن بنائے جانے کا ہدف مقرر کیا ہے اس کا انکشاف نہیں کیا. اس سے قبل وششٹھ نے نتیش کمار کو جے ڈی یو کا بنیادی ممبر بنایا اور بعد میں پارٹی کے فیصلے کے مطابق نتیش کے 25 افراد کو ممبر بنائے جانے پر ان کو حسن کارکردگی سرٹی فیکٹ دیا گیا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Why didnt the up government act before mathura clashes asks nitish kumar in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply