اخلاق واقعہ اور اعزازواپسی کے باوجود جیتے اور اب پھر کچھ ہوا تو بھی جیتیں گے بی جے پی صدر امیت شاہ

جے پور:بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے صدرامیت شاہ نے کہا کہ ”اخلاق لنچنگ “ اور ہجومی تشدد و عدم رواداری کے خلاف احتجاج میں سماجی کارکنوں و دانشوروں کی ایوارڈ واپسی کے بعد بھی ہم ہی جیتے تھے اور کچھ بھی ہو جائے اب بھی ہم ہی جیتیں گے۔

انہوں نے راجستھان کے دارالخلافہ جے پور میں پارٹی کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے یہ بات زور دے کر کہی کہ اخلاق والا معاملہ ہوا تب بھی جیتے،ایوارڈ واپسی ہوئی تب بھی جیتے اور اب کچھ کریں گے تو بھی جیتیں گے ۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ نے وزیر اعظم نریندر مودی سے زیادہ غیر ملکی دورے کیے ہیں۔لیکن من موہن سنگھ صرف دو جملے بول کر واپس آجاتے تھے ۔یہاں تک کہ ایک بار تو وہ سنگا پور میں ملیشیا کے لیے لکھی گئی تقریر ہی پڑھ کر چلے آئے۔لیکن اب وزیر اعظم مودی جہاں جاتے ہیں وہاں ان کا زبردست استقبال ہوتا ہے ۔

یہ استقبال بی جے پی کا نہیں 125کروڑ ہندوستانیوں کا ہوتا ہے۔راجستھان اسمبلی کے ہونے والے انتخابات کے حوالے سے امیت شاہ نے کہا کہ یہ انتخابات ممبران اسمبلی، وزیر یا وزیر اعلیٰ منتخب کرنے کے لیے نہیں بلکہ بی جے پی کے لیے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ2019کے لوک سبھا انتخابات سر پر ہیں اور ریاستوں کے اسمبلی انتخابات کافی اہم ہیں۔ ہم ان ریاستوں میں جہاں انتخابات ہونے والے ہیں پھر بر سر اقتدار آئیں گے۔

امیت شاہ نے آام میں نیشنل رجسٹر آف سٹیزنس کے حوالے سے کانگریس کو بھی زبردست ہدف تنقید بنایا۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس کو مخاطب کرتے ہوئے کہاکہ ”ارے آپ کو جتنی مخالفت کرنی ہے کر لیں ، بھارتیہ جنتا پارٹی مصمم عزم کیے ہے کہ ایک بھی بنگلہ دیشی در انداز کو سرزمین ہند پر رہنے نہیں دیں گے، چن چن کر نکالیں گے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: We will win all elections despite akhlaq award wapsi amit shah in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply