راجیہ سبھا میں وزیروں کی غیر موجودگی پر چیئرمین حامد انصاری کا اظہار ناخوشی

نئی دہلی:راجیہ سبھا میں آج وقفہ سوال کے دوران متعلقہ وزیر کی غیر موجودگی پر سخت ناراضگی ظاہر کرتے ہوئے چیئرمین حامد انصاری نے کہا کہ گزشتہ 10 برسوں میں اس طرح کی صورتحال نہیں رہی ہے کہ وزیر سوالات کا جواب دینے کے لئے ایوان میں موجود نہ( نہ) رہیں۔ سوال کے دوران ماحولیات، جنگلات اور موسمیاتی تبدیلی کی وزارت کا سوال تھا لیکن اس وزارت کے کام کاج دیکھنے والے مرکزی انسانی وسائل کی ترقی کے وزیر پرکاش جاوڈیکر ایوان میں موجود نہیں تھے۔ مسٹر انصاری نے دوبارہ وزیر کا نام پکارا۔
تبھی کانگریس کے جے رام رمیش کے ساتھ ہی سماج وادی پارٹی اور دوسری پارٹیوں کے رکن ایوان میں وزیر کی غیر موجودگی کا مسئلہ اٹھایا۔ کانگریس کے آنند شرما نے کہا کہ پارلیمانی امور کے وزیر مملکت بھی ایوان میں موجود نہیں ہیں۔ مسٹر رمیش نے کہا کہ اس حکومت کے وزیر اس ایوان کو سنجیدگی نہیں لے رہے ہیں۔ ایوان میں گزشتہ ہفتے بھی سوال کے دوران متعلقہ وزیر موجود نہیں تھے۔ اسی دوران مرکزی وزیر آبی وسائل اوما بھارتی نے وزیر کی غیر حاضری پر چیئرمین اور ایوان سے معافی مانگی لیکن رکن اس پر خاموش نہیں ہوئے۔
محترمہ بھارتی نے سوال کا جواب دینے کی اجازت مانگی لیکن مسٹر انصاری نے کہا کہ یہ ان کی وزارت نہیں ہے اور متعلقہ وزیر کو ہی جواب دینا ہوتا ہے۔ اس کے بعد مسٹر انصاری نے کہا کہ وزیر کی موجودگی نہ ہونے کی وجہ سے متعلقہ سوال کا جواب نہیں دیا جائے گا۔ اسی دوران مسٹر جاوڈیکر ایوان میں آ گئے۔ انہوں نے معافی مانگنے کی کوشش کی لیکن مسٹر انصاری نے کہا کہ بدنظمی کی صورتحال بن گئی ہے۔ جب سوال آتا ہے تو وزیرکی موجودگی لازمی رہتی ہے۔ گزشتہ 10 برسوں میں ایسی صورتحال نہیں رہی ہے۔ پارلیمانی امور کے وزیر اس معاملے کو دیکھیں گے۔ حالانکہ اس کے بعد چیئرمین نے مسٹر جاوڈیکر کو جواب دینے کی اجازت دے دی تب انہوں نے معذرت طلب کرتے ہوئے کہا کہ لوک سبھا میں بل پیش کرنا تھا اس لئے آنے میں کچھ تاخیر ہوئی ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Vp hamid unhappy as ministers go missing during question hour in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply