اترپردیش کے فیض آباد میں آئی ایس آئی کا جاسوس ہونے کے شبہ میں ایک گرفتار

ایودھیا:انسداد دہشت گردی دستہ (اے ٹی ایس) نے پاکستان کی خفیہ ایجنسی (آئی ایس آئی) کے مشتبہ ایجنٹ آفتاب علی کو بدھ کے روزفیض آباد سے گرفتار کر لیا۔ سرکاری ذرائع نے یہاں بتایا کہ اے ٹی ایس اتر پردیش کو کچھ عرصے سے اطلاع مل رہی تھی کہ پاکستانی سفارت خانے کے انٹیلی جنس حکام اور پاکستان کی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کو ہندستان کی فوجی سرگرمیوں کے حوالے سے اہم اطلاعات بہم پہنچائی جا رہی ہیں۔ اے ٹی ایس لکھنؤ ٹیم نے اس اطلاع کی مختلف ذرائع سے تصدیق کرنے کے بعد ملٹری انٹلی جنس فیض آباد کے تعاون سے مشتبہ ایجنٹ آفتاب علی کو فیض آباد سے گرفتار کر لیا۔ اس کے علاوہ ٹیم نے ایک دیگر مشتبہ کو پوچھ گچھ کے لئے حراست میں لیا ہے۔
واضح رہے کہ آئی ایس آئی کو اطلاعات بھیجنے کے سلسلے میں اے ٹی ایس نے باریک بینی سے تحقیقات کی تو پتہ چلا کہ آفتاب کا رابطہ نئی دہلی میں پاکستانی سفارت خانے سے ہے اور وہ نئی دہلی جاکر پاکستانی سفارت خانہ کے ایک اہلکار سے مل بھی چکا ہے۔ اس افسر کے نام کی تصدیق کی جا رہی ہے۔ آفتاب نے پاکستان میں آئی ایس آئی سے جاسوسی کی تربیت بھی لی ہے۔ آفتاب کے بینک اکاؤنٹ میں جمع ہوئے پیسے کی بھی جانچ کی جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ ایڈیشنل پولیس سپرنٹنڈنٹ راجیش ساہنی کی قیادت میں آئی ایس آئی کے مشتبہ ایجنٹوں کو گرفتار کرنے والی ٹیم کو ایوارڈ دیا جائے گا۔

Title: uttar pradesh ats arrests a suspected isi agent in faizabad | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply