اردو ہندوستان کی بیٹی ہے، اس کی خوشبو پوری دنیا میں پھیلنی چاہئے:مرکزی وزیر رمیش پوکھریال نشنک

نئی دہلی: اردو ہندوستان کی بیٹی ہے اور ہندوستان میں پیدا ہوئی اور یہیں پلی بڑھی۔ ہم چاہتے ہیں کہ اردو کی شیرینی اور خوشبو مشک کی طرح پوری دنیا میں پہنچے۔ اس کے لیے جو بھی تعاون ہوگا وہ ہم وزارت کی جانب سے کریں گے۔

اردو کے لیے جتنے فنڈ کی ضرورت ہوگی ہم مہیا کرائیں گے۔یہ باتیں مرکزی وزیر برائے فروغ انسانی وسائل جناب رمیش پوکھریال نشنک نے قومی اردو کونسل کے وائس چیئرمین پروفیسر شاہد اختر اور ڈائرکٹر ڈاکٹر شیخ عقیل احمد، جناب مظاہر خان (ایگزیکٹیو بورڈ کے ممبر) کے ساتھ جائزہ میٹنگ میں کہیں۔

انھوں نے قومی اردو کونسل کی اسکیموں کی جانکاری لی اور کونسل کے کاموں پر اطمینان کا اظہار کیا اور کہا کہ آپ لوگ کونسل میں اردو کے فروغ کے لیے بہت عمدہ کام کررہے ہیں لیکن اس میں نئی اسکیموںکا بھی اضافہ ہونا چاہے۔ انھوں نے اپنی وزار ت کے انڈرسکریٹری اور ڈپٹی سکریٹری سے بھی کونسل کو نئی اسکیمو ںکی تجاویز بھیجنے کی ہدایت دی تاکہ اردو کی ترقی کو رفتار مل سکے۔

وزیر موصوف نے کونسل کے اردو کمپیوٹر کورس CABA-MDTP اسکیم کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ مجھے یہ جان کر بہت خوشی ہوئی کہ اس کورس سے فارغ طلبا اعلیٰ عہدوں پر فائز ہیں۔ انھوں نے کونسل سے ایسے طلبا کی فہرست طلب کی ہے جو کونسل کے مراکز سے فارغ ہوکر اچھے عہدوں پرفائز ہیں۔ انھوں نے کہا کہ ہم انھیں وزارت میں دعوت دے کر ان کی حوصلہ افزائی کریں گے اور انھیں اعزاز سے نوازیں گے۔

انھوں نے کونسل کے مراکز میں شفافیت لانے کے لیے کہا کہ کونسل کے ڈائرکٹر اور وائس چیئرمین سینٹر والوں کو بغیر اطلاع دےے کمپیوٹر مراکز کا دورہ کریں۔ انھوں نے یہاں تک کہا کہ وہ خود بھی اچانک کسی سینٹر کا دورہ کرسکتے ہیں۔

کونسل کے ڈائرکٹر ڈاکٹر شیخ عقیل احمد نے انھیں اطلاع دی کہ قومی اردو کونسل داراشکوہ کی فارسی کتابوں کا اردو ترجمہ بھی شائع کرنے والی ہے تو وہ خوش ہوئے اور کہا کہ یہ ایک اچھی پہل ہے۔

داراشکوہ نے ہندوستانی تہذیب وثقافت پر بہت کچھ لکھا ہے جو فارسی میں ہے ، اسے اردو اور دیگر زبانوں میں منظرعام پر لایا جائے۔ہندوستان کی قدیم تہذیب اور فلسفہ کو اردو میں ترجمہ کر کے گھر گھر پہنچانا بھی ہماری ذمے داری ہے۔ مدارس میں بھی ایسی کتابوں کا ہونا ضروری ہے تاکہ مدارس کے طلبا بھی ہندوستان کی ثقافت اور فلسفہ سے روشناس ہوسکیں اور انھیں بھی ملازمت میں مساوی مواقع مل سکیں۔

وزیرموصوف نے یہ سن کرطمانیت کا اظہار کیا کہ سابق وزیراعظم جناب منموہن سنگھ کے دور اقتدار کے آخری پانچ برسوں میں این سی پی یو ایل کو 146 کروڑ روپے کا فنڈ ملا تھا جبکہ موجودہ وزیراعظم عزت مآب نریندر مودی کے پانچ سال کے اقتدار میں یہ بجٹ بڑھ کر 376 کروڑ روپے کا ہوگیا۔

انھوں نے کہا کہ اس سلسلے کو برقرار رکھتے ہوئے قومی اردو کونسل کے لیے فنڈ کی کوئی کمی نہیں ہونے دیں گے۔

اس جائزہ میٹنگ میں وزارت کے سکریٹری، زبانوں کے ڈپٹی و انڈر سکریٹری اور ان کے پی ایس کے علاوہ قومی اردو کونسل کے اسسٹنٹ ڈائرکٹر (ایڈمن) جناب کمل سنگھ اورجونیئر اکاﺅنٹس آفیسر محمد احمد بھی موجود تھے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Urdu is daughter of india says hrd minister in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.