وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے آڈوانی، جوشی اور اوما بھارتی سے لکھنؤ میں ملاقات کی

لکھنؤ: اترپردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ اجودھیا میں 6دسمبر1992 کو بابری مسجد کے انہدام کے معاملہ میں مرکزی تفتیشی بیورو (سی بی آئی) کی خصوصی عدالت میں پیش ہونے کے لئے آئے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی ) کے سینئر لیڈر لال کرشن اڈوانی سے ملنے گیسٹ ہاؤس پہنچے۔ مسٹر اڈوانی تقریبا10بجے لکھنو ہوائی اڈہ سے ایم جی روڈ واقع وی وی آئی پی گیسٹ ہاؤس پہنچے تھے۔تھوڑی دیر بعد مسٹر یوگی نے ان سے گیسٹ ہاؤس میں ملاقات کی اجودھیا میں چھ دسمبر1992 کو بابری مسجد انہدام معاملہ میں مسٹر اڈوانی اور جوشی کے علاوہ پارٹی کی ایک اور سینئر رہنما اوما بھارتی کو بھی سی بی آئی کی خصوصی عدالت میں پیش ہونا ہے۔ مسٹر اڈوانی سمیت بارہ لوگوں پر الزامات طے ہونے ہیں۔
الزام طے ہونے کے وقت عدالت میں ملزم کا موجود رہنا ضروری ہوتا ہے ۔مسٹر اڈوانی ،مسٹر جوشی ،محترمہ بھارتی ، بی جے پی رکن پارلیمان ونے کٹیار، وشو ہندو پریشد کے لیڈر وشنو ہری ڈالمیا اور سادھوی رتنبھرا کو گزشتہ 26مئی کو عدالت میں پیش ہونا تھا، لیکن عدالت کی کارروائی شروع ہوتے ہی انکے وکیل نے حاضری سے استثنیٰ کی درخواست دیدی۔خصوصی عدالت کے جج سریندر کمار یادو نے صرف اس سماعت کے لیے حاضر ی سے استثنیٰ تو دے دیا تھا لیکن 30مئی کو انھیں ہر حال میں پیش ہونے کا حکم دیا تھا۔ سی بی آئی نے بابری مسجد انہدام میں سازش سے متعلق الزام سے 2001میں بری کردیا تھا۔2010 میں الہ آباد ہائی کورٹ نے بھی سی بی آئی عدالت کے حکم کو صحیح مان لیا تھا لیکن سپریم کورٹ نے گزشتہ 19اپریل کو سی بی آئی کی خصوصی عدالت کو سازش کے الزام میں بھی مقدمہ چلانے کا حکم دیدیا۔

Title: up cm adityanath meets advani ahead of framing of charges by cbi court in Urdu | In Category: ہندوستان  ( india ) Urdu News

Leave a Reply