اترپردیش میں کئی کاؤنٹنگ سینٹروں پر تشدد، لاٹھی چارج، 4زخمی،گرفتاریاں

لکھنؤ: اترپردیش میں بلدیاتی انتخابات میں ڈالے گئے ووٹوں کی گنتی کے دوران مظفر نگر اور قنوج میں کئی کاؤنٹنگ سینٹروں پر ہنگامہ اور مار پیٹ کی خبریں ہیں۔ متصادم گروپوں کو منتشر کرنے کے لیے پولس کو لاٹھی چارجبھی کرنا پڑا جس میں کم از کم4افراد کے زخمی ہونے کی اطلاع ملی ہے۔
اسی دوران مظفر نگر سے ایک ویڈیا فوٹیجبھی منظر عام پر آیا ہے جس میں کاؤنتنگ اسٹیشن کے اندر ایک پولس اہلکار کو موبائیل فون پر بات کرتے دیکھاجا رہا ہے جبکہ وہاں فون استعمال کرنا منع ہے۔قنوج میں ووٹ شماری کے مرکز میں انتظامات پر سوال اٹھائے گئے اور امیدواروں کا کہنا ہے کہ اگرگنتی میں شفافیت نہ برتی گئی اور باضابطگی نہ برتی گئی تووہ ووٹ شماری کا بائیکاٹ کردیں گے۔
اناؤ سے بھی کچھ اسی قسم کی شکایات ملی ہیں۔وہاں یہ الزام لگایا جارہا ہے کہ کاؤنتنگ افسر اور کونسلرکی ٹیبل ایک ساتھ لگا دی گئی ہے جس سے دھاندلی کا خدشہ ہے۔
علاوہ ازیںرام پور میں بھی تشدد ہوا ہے۔ یہاں ایک ہی امیدوار کے حامی آپس میں لڑ پڑے اور پولس پر بھی حملہ کیا۔ پولس نےدو افراد کو گرفتار کر لیا۔کاس گنج سے بھی تشد ہونے کی خبر ملی ہے یہاںکاوؤنٹنگ اسٹیشن کے اندر ہی ہاتھا پائی ہوگئی۔

Title: up civic polls police lathi charge | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply