کنہیا کمار و عمر خالد سمیت جے این یو کے 5طلبا کو جرمانہ سمیت کئی مختلف سزائیں

نئی دہلی:ملک سے بغاوت کے الزام میں ماخوذ جواہر لال نہرو یونیورسٹی(جے این یو) کے پانچوں ملزم طلبا کے خلاف تحقیقاتی کمیٹی نے اپنی جانچ رپورٹ یونیورسٹی انتظامیہ کو سونپ دی جس میں اس نے21طلبا کو9فروری کے پروگرام اور اس میں نعرے بازی کاملزم قرار دیا۔ ان میں سے دو سابق طلبا ہیں۔کمیٹن نے ان طلبا کو مختلف سزائیں سنائی ہیں۔ اسٹوڈنٹس یونین کے صدر کنہیا کمار پر ضابطہ شکنی کے معاملہ میں یونیورسٹی انتظامیہ نے 10ہزار روپے کا جرمانہ لگایا ہے۔ان کے دوسرے ساتھی عمر خالد پر 20ہزار روپے جرمانہ لگانے کے ساتھ ساتھ انہیں ایک سال کے لیے یونورسٹی سے نکال دیا گیا۔جے این یو کی پانچ رکنی اعلیٰ سطحی تحقیقاتی کمیٹی نے راما ناگا پر بھی20ہزار روپے جرمانہ عائد کیا اور چوتھے ملزم اقامتی طالبعلم اشوتوش کمار کو ایک سال کے لیے ہاسٹل سے نکال دیا ۔ان پر20ہزار روپے جرمانہ بھی لگایا گیا۔پانچویں ساتھی انیربن بھٹاچاریہ کو 15جولائی تک کے لیے کالج سے رسٹی کیٹ کر دیا گیا۔ نیز انہیں آئندہ پانچ سال تک جے این یو کے کسی دوسرے کورس میں داخلہ نہیں دیا جائے گا۔یاد رہے کہ 9فروری کو پارلیمنٹ حملہ کے قصور وار افضل گورو کی پھانسی کی برسی کے موقع پر جے این یو میں ایک پروگرام منعقد کیا گیا تھا جہاں مبینہ طور پر ملک دشمن نعرے لگائے گئے تھے، جس پر طلبا کو گرفتار کر لیا گیا تھا۔ جنہیں بعد میں ضمانت پر رہا کر دیا گیا۔

Title: umar khalid removed for a semester by jnu kanhaiya kumar fined | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply