مسلح تصادم میں لشکر طیبہ کے دو انتہا پسند ہلاک،احتیاطی تدابیر کے طور پر تعلیمی ادارے بند

سری نگر: شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے ایپل ٹاون سوپور میں پیر کی صبح انتہا پسندوں اور سیکورٹی فورسز کے مابین ہونے والے ایک مسلح تصادم میں لشکر طیبہ سے وابستہ دو انتہا پسند ہلاک ہو گئے۔ مقامی انتہا پسندوں کی ہلاکت کے تناظر میں احتجاجی مظاہروں کے خدشے کے پیش نظر ضلع بھر کے تمام تعلیمی اداروں میں احتیاطی اقدامات کے طور پر یک روزہ تعطیل کے اعلان کے علاوہ موبائیل انٹرنیٹ خدمات منقطع کی گئی ہیں۔ ہلاک انتہا پسندوں کی شناخت نعیم احمد ساکنہ براٹھ کلان سوپور اور عاشق حسین ساکنہ اندر گام پٹن کے بطور کی گئی ہے۔ دونوں انتہا پسند تنظیم لشکر طیبہ سے وابستہ تھے۔ ذرائع نے بتایا کہ مسلح تصادم کے مقام سے تین اے کے 47 رائفلیں برآمد کی گئیں۔ شمالی کشمیر کے ڈپٹی انسپکٹر جنرل آف پولیس نتیش کمار نے مسلح تصادم کی تفصیلات فراہم کرتے ہوئے بتایا کہ سوپور کے شنکر گنڈ براٹھ میں انتہاپسندوں کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع ملنے پر جموں وکشمیر پولیس ، فوج اور سینٹرل ریزرو پولیس فورسز نے مذکورہ گاو¿ں میں پیر کی صبح تلاشی آپریشن شروع کیا۔ انہوں نے بتایا کہ تلاشی آپریشن کے دوران انتہاپسندوں نے سیکورٹی فورسز پر فائرنگ کردی جس پرجوابی فائرنگ کی گئی جس میں دو انتہاپسند ہلاک ہو گئے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Two militants killed in encounter in jammu and kashmirs sopore in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
What do you think? Write Your Comment