تمل ناڈو اسپیکر نے ناڈی ایم کے کے 18 دناکرن حامی ممبران اسمبلی کو نااہل قرار دے دیا

چنئی: (یو این آئی)تمل ناڈو اسمبلی کے اسپیکر پی دھنپال نے انا ڈی ایم کے سے نکالے گئے پارٹی لیڈر ٹی ٹی وی دناکرن کی حمایت کر رہے 18 منحرف ممبران اسمبلی کو آج نااہل قرار دے دیا۔ اسمبلی سکریٹری کے بھوپتی کی جانب سے جاری ایک ریلیز کے مطابق آئین کی دسویں شیڈول کے تحت 1986 کے دل بدلی مخالف قانون کے تحت تمام 18 باغی ممبران اسمبلی کو نااہل قرار دیا گیا ہے۔ ان ممبران اسمبلی نے وزیر اعلیٰ کے پلانی سوامی سے حمایت واپس لے لی تھی۔
مسٹر بھوپتی نے کہا کہ آج تمام 18 ممبران اسمبلی کی رکنیت فوری اثر سے ختم کردی گئی ہے ۔انا ڈی ایم کے کے مسٹر پلانی سوامی اور سابق وزیر اعلی او پنیرسیلوم کی قیادت والے دو مخالف گروپوں کے 21 اگست کو ہوئے انضمام کے خلاف 19 ممبران اسمبلی نے بغاوت کا جھنڈا بلند کیا تھا۔ انہوں نے 22 اگست کو وزیر اعلی سے حمایت واپس لینے سے متعلق خط گورنر سی ودیا راؤ کو سونپا تھا اور مسٹر پلانی سوامی کو وزیر اعلی کے عہدے سے برخاست کرنے کی بھی مانگ کی تھی۔اس کے بعد پلانی سوامی حکومت اقلیت میں آگئی تھی۔
اگرچہ اس کے چند دنوں بعد باغی ممبران اسمبلی میں سے ایک جکیتن نے مسٹر پلانی سوامی کو حمایت دینے کا فیصلہ کیا۔ اسمبلی اسپیکر نے باغی ممبران اسمبلی کو دو بار نوٹس جاری کرکے پوچھا تھا کہ ان کے خلاف دل بدلی مخالف قانون کے تحت کارروائی کیوں نہیں کی جائے؟ ممبران اسمبلی کے نوٹس کا جواب نہ دینے پر اسمبلی اسپیکر نے انہیں نااہل قرار دےدیا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Tn speaker disqualifies 18 aiadmk mlas supporting dhinakaran in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply