جنھیں اپنے ماں باپ کے خون کا پتہ نہیں ہوتا ہے وہ لوگ خود کو سیکولر اور ماڈرن تصور کرتے ہیں: اننت کمار ہیگڑے

نئی دہلی: مرکزی وزیر اننت کمار ہیگڑے نے پیر کو کرناٹک کے کوپّل میں ایک تقریب میں کہا کہ جنھیں اپنے ماں اور باپ کے خون کا پتہ نہیں ہوتا ہے وہ لوگ ہی خود کو سیکولر اور ماڈرن تصور کرتے ہیں۔
اننت ہیگڑے نے لوگوں کو خود کی شناخت سیکولر کی جگہ مذہب اور ذات کی بنیاد پر کرنے کی بات کہی۔ ہیگڑے نے کہا کہ آئین میں تبدیلی کی جا سکتی ہے، ہم یہاں آئین بدلنے کے لیے آئے ہیں۔
اننت ہیگڑے نے کوپّل ضلع میں ’برہمن یوا پریشد‘ کی ایک تقریب میں خطاب کے دوران یہ سبھی باتیں کہیں۔مرکزی حکومت میں اسکل ڈیولپمنٹ کے وزیر ہیگڑے نے کہا کہ وہ لوگ جو اپنی جڑوں سے انجان ہوتے ہوئے خود کو سیکولر کہتے ہیں ان کی خود کی کوئی شناخت نہیں ہوتی۔ انھیں اپنی جڑوں کا پتہ نہیں ہوتا، لیکن وہ دانشور ہوتے ہیں۔
ہیگڑے نے کہا کہ ایک نئی روایت شروع ہو گئی ہے جس میں لوگ خود کو سیکولر بتاتے ہیں۔ یہ مناسب نہیں ہے، انھیں خوشی ہوگی اگر کوئی یہ دعویٰ کرے کہ وہ مسلم، عیسائی، لنگایت، برہمن یا ہندو ہے۔
اس سے مجھے خوشی ہوگی کیونکہ وہ شخص اپنی رگوں میں بہہ رہے خون کے بارے میں جانتا ہے۔ لیکن مجھے یہ نہیں پتہ کہ انھیں کیا کہہ کر بلایا جائے جو خود کو سیکولر بتاتے ہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Those who call themselves secular dont know about their parentage says karnataka mp in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply