طیارہ اغوا کی واردات کے 37 سال بعد دہلی کی ایک عدالت آج فیصلہ سنا سکتی ہے

نئی دہلی:نئی دہلی سے جموں و کشمیر کے دارالخلافہ سری نگر جانے والے ایک طیارے کو ہائی جیک کر کے پاکستان کے شہر لاہور لے جانے کی واردات کے37سال بعد دہلی کی ایک سیشن عدالت آج (پیر، 27اگست) دو اغوا کنندگان پر مقدمہ کا فیصلہ سنا سکتی ہے۔

اس طیارے میں111مسافر اور 6 افراد پر مشتمل عملہ شامل تھا۔پانچ ہائی جیکروں میںسے دو پر اس کیس کےءحوالے سے ملک کے خلاف غداری کے الزامات کا ممقدمہ چلایا گیا تھا۔ایڈیشنل سیشن جج اجے پانڈے ملزموں ستنام سنگھ اور تجند پال سنگھ کی قسمت کا فیصلہ کریں گے۔

ستنا م جو واردات انجام دیتے وقت 30سال کا تھا اب67سال کا ہے جبکہ تجندر پال سنگھ کی عمر 66سال ہے۔ پاکستان میں سزا بھگتنے کے بعد یہ دونوں کناڈا چلے گئے تھے اور1998میں انہیں29ستمبر1981کی واردات کے سلسلہ میں انہیں ہندوستان کے حوالے کر دیا گیا تھا۔20جولائی2017کو ان دونوں کو ضمانت پر رہا کر دیا گیا تھا اور اب انہیں ہدایت کی گئی ہے کہ فیصلہ سنائے جاتے وقت وہ عدالت میں موجود رہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Thirty seven years after plane hijacking delhi court to pronounce verdict on monday in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply