عمر کھیڑ فساد میں گرفتار35ملزمین کو عدالتی تحویل میں بھیجا گیا

ممبئی:مہاراشٹر کے ایوت محل ضلع کے عمرکھیڑ نامی علاقے میں گنپنی وسرجن کے موقع پر پھوٹ پڑنے والے فرقہ فسادات میں گرفتار 42 افراد میں سے ،جس میں 2 غیر مسلم بھی شامل ہیں ،35 ملزمین کو پولس تحویل سے عدالتی تحویل میں دیئے جانے کے احکامات جاری کر دیے۔ جبکہ مقامی عدالت کے مجسٹریٹ نے باقی 7ملزمین کی پولس تحویل میں مزید4دنوں کا اضافہ کردیا – ان سات ملزمین میں سے 6 مسلم اور ایک غیر مسلم ہے۔ ملزمین کو قانونی امداد فراہم کرنے والی تنظیم جمعیت علماءمہاراشٹر (ارشد مدنی)کے وکیل الیاس سید نے بتایا کہ آج مجسٹریٹ ایس کے شیخ کے سامنے 42 ملزمین کو پیش کیاگیا جس کے دوران مدعا علیہہ کی مخالفت کے بعد مجسٹریٹ نے35 ملزمین کو عدالتی تحویل میں بھیج دیا جبکہ مزید 7 ملزمین کو پولس تحویل میں دیئے جانے کے احکامات جاری کیئے۔
واضح رہے کہ گذشتہ جمعرات کی شب گنیش وسرجن کے موقع پر ملی جلی آبادی والے عمر کھیڑ کے ناگ چوک اور ساج پوری کے علاقے میں دیر رات گئے ڈھول تاشے کے ساتھ گنپتی کا جلوس رواں دواں تھا اسی درمیان دو گنیپی منڈلوں کے درمیان تنازعہ پیدا ہوا جس کے بعد دونوں گروپوں نے ایک دوسرے پر پتھراؤ کیا اور اس دوران پتھر مسلم بستیوں پر بھی پھینکے گئے جس کے بعد مقامی مسلم نوجوانوں نے مداخلت کی نیز دونوں فرقوں کے درمیان ہونے والے پتھراؤ کے نتیجے میں ایک گنپی کی مورتی ٹوٹ گئی جس کے بعد اکثریتی فرقہ سے تعلق رکھنے والے نشہ میں دھت افراد نے علاقے میں کہرام مچا دیا اور گنپتی کا جلوس وہیں روک دیا تھا اور پولس سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ مورتی کو توڑنے والوں کی گرفتاری ہوجانے کے بعد ہی وسرجن انجام دیں گے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Thirty five accused sent to judicial custody in umarkhed in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply