ہریانہ میں دوروز میں اجتماعی عصمت دری کی دوسری اور واردت

نئی دہلی: ملک میں تسلسل سے ہونے والی ریپ کی وارداتوںمیں کوئی کمی وقعہونے میں نہیں آرہی اور آئے روز ملک کے کسی نہ کسی حصے سے کمسن بچیوں سے لے کر ادھیڑ عمرکی خواتین کی عصمت دری کی خبر آتی رہتی ہے۔ ابھی جموں و کشمیر میںکٹھوعہ، اتر پردیش میںاناو¿ اور ہریانہ میں میوات میں کمسن لڑکیوں کے ریپ اور قتل کی وارداتوں پر عوامی غم و غصہ کم بھی نہیںہو اتھا کہ ہریانہ میں ہی جنسی زیادتی کا ایک اور واقعہ پیش آیا۔یہ تازہ واردات گوڑ گاو¿ںکے سوہنا روڈ کی ہے جہاں ایک 19سالہ لڑکی کی ایک آٹو رکشہ ڈرائیور سمت 4افراد نے اجتماعی آبرو ریزی کی۔پولس نے ملزموںکے خلاف معاملہ درج کر کے کارروائی شروع کر دی ہے۔یہ لڑکی سوہنا بس اسٹینڈ پر علی گڑھ جانے والی بس کا انتظار کر ہی تھی کہ آٹو ڈرائیور اس کے پاس گیا اور اس کو یقین دلایا کہ اسے گوڑ گاو¿ں سے بس مل جائے گی۔لڑکی اسکے جھانسے میں آگئی۔راستے میں ڈرائیور نے اپنے چار دوستوں کو بھی بٹھا لیا۔وہ چاروں آٹو میں گھس گئے اور لڑکی کو زبردستی بیہوشی کی دوا کی آمیزش والی شراب پلائکر اس سے پانچوں نے ریپ کیا اور راستے ہی پھینک کر فرار ہو گئے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Teen gang raped by auto rickshaw driver and 4 others in gurugram in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply