کرشنا وادی واردات میں پاکستانی فوج کا ہاتھ ہونے کے ہندوستان کے پاس وافرثبوت موجودہیں: حکومت

نئی دہلی: ہندوستان نے کہا ہے کہ اس کے پاس اس بات کے وافر ثبوت موجود ہیں کہ جموں و کشمیر کے کرشنا گھاٹی سیکٹر میں ہندوستانی فوجیوں کے قتل اور ان کی لاش مسخ کرنے میں پاکستانی فوج ملوث تھی۔ وزارت خارجہ کے ترجمان گوپال باگلے نے یہاں معمول کی بریفنگ میں سوالوں کے جواب میں کہا کہ شہید ہندوستانی جوانوں کے خون کے نشانات کنٹرول لائن تک گئے ہیں اور روجا نالا کے پاس خون کے نشان سے صاف ظاہر ہے کہ جن لوگوں نے یہ وحشیانہ واردات انجام دی ہے وہ پاک مقبوضہ علاقے میں واپس گئے ہیں۔
مسٹر باگلے نے کہا کہ پاکستان کے ہائی کمشنر عبدالباسط کو خارجہ سکریٹری ایس جے شنکر نے طلب کیا تھا اور انہیں ہندوستانی جوانوں کی پاکستانی فوج کے سپاہیوں کے ذریعہ قتل اور لاشوں کی بے حرمتی کرنے پر ہندوستان کے غصے کو ظاہر کیا اور کہا کہ یہ حرکت انسانیت کے کسی بھی پیمانے کے مطابق نہیں ہے۔ او ریہ انتہائی اشتعال انگیز کارروائی ہے۔ ہندوستان نے مطالبہ کیا کہ پاکستان اس واقعہ کے لئے ذمہ دار فوج کے افسران اور کمانڈروں کے خلاف کارروائی کرے۔
انہوں نے بتایا کہ خارجہ سکریٹری نے پاکستانی ہائی کمشنر کو واضح طور پر بتایا کہ اس واقعہ میں پاکستانی فوج کے افراد شامل تھے اور ہندوستان کے پاس اس بات کے وافر ثبوت موجود ہیں۔ تاہم مسٹر عبدالباسط نے پاکستانی فوج کے رول سے صاف انکار کیا۔ انہوں نے کہا کہ وہ حکومت ہند کے جذبات اسلام آباد میں اپنی حکومت تک پہنچادیں گے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Sufficient evidence to prove pakistan army mutilated indian soldiers govt in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply