سر قلم کرنے کی دھمکی ملنے کے بعد کنہیا اور عمر خالد کی سیکورٹی بڑھادی گئی

نئی دہلی: بغاوت کے الزام میں ماخوذ جے این یو کے طلباکنہیا کمار اور عمر خالدکو دی گئی اس دھمکی کے بعد کہ ان کا سر قلم کر دیا جائے گا دہلی پولس نے ان کے ارد گرد پہرہ اور زیادہ مضبوط کر دیا۔ذرائع کے مطابق دہلی ٹرانسپورٹ کارپوریشن کی روٹ نمبر604کی ایک بس میں ایک لاوارث تھیلا پایا گیا تھا جس کی تلاشی لینے پر اس میںایک ریوالوراورچھ کارآمد کارتوسوں کے علاوہ ایک دھمکی نامہ بھی ملا جس میں امیت جانی نام کے کسی شخص کی طرف سے لکھا ہوا تھا کہ مسٹر کمار اور مسٹر خالد کا سر اڑا دیا جائے گا۔
پولس کا خیال ہے کہ یہ فرضی نام سے لکھا گیا دھمکی نامہ ہے۔تاہم پولس نے نامعلوم افراد کے خلاف کیس درج کر کے مسٹر کمار اور مسٹر خالد کی سیکورٹی میں اضافہ کر دیا ۔کمار جس وقت کیمپس کے باہر جائیں گے تو سادہ وردی میں ملبوس تین پولس اہلکار ان کی حفاظت پر مامور رہیں گے۔ اور یونیورسٹی حکام اس کے پابند ہوں گے کہ جب بھی مسٹر کمار یونیورسٹی سے باہر جائیں وہ پولس کو مطلع کر دیں تاکہ انہیں فوراً سیکورٹی بہم پہنچائی جا سکے۔

Title: student kanhaiya kumar gets more security after note warns of beheading | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply