ملک کی نام نہاد سیکولر پارٹیاں مسلمانوں کی ترقی کی راہ میں روڑے اٹکا رہی ہیں:نقوی

نئی دہلی:اقلیتی امور کے مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے کانگریس پر شدید نکتہ چینی کرتے ہوئے کہا کہ اس پارٹی نے ملک پر اقتدار کے طویل مدت کے دوران پسماندہ اور دبے کچلے عوام کو ترقی کے نام پر صرف گمراہ کیا اور اب جب نریندر مودی حکومت ’سب کا وکاس ‘ کرناچاہتی ہے تو خود ساختہ سیکولر جماعتیں اس کی راہ میں روڑے اٹکا رہی ہیں۔ مسٹر نقوی آج یہاں بھارتیہ مسلم پسماندہ کانفرنس سے خطاب کررہے تھے۔ کانفرنس کا انعقاد سابق ممبر پارلیمنٹ اور بی جے پی کے رہنما صابر علی نے کیا تھا۔مسٹر نقوی نے کہا کہ موجودہ حکومت ملک میں سب کا ساتھ سب کا وکاس چاہتی ہے اور اسی نعرہ کو عملی شکل دینے کے لئے وزیر اعظم نریندر مودی نے ملک میں ایک ایسا قانون بنانے کی کوشش کی جس میں تمام پسماندہ اور انتہائی پسماندہ طبقات کے آئینی حقوق کی ضمانت دی گئی ہے۔

وزیر اعظم مودی کی کابینہ نے اس مسودہ قانون کو منظوری دی اور اسے لوک سبھا میں بھی پاس کرالیا گیا لیکن جب اسے راجیہ سبھا میں پیش کیا گیا تو وہاں کانگریس، سماج وادی پارٹی، جنتا دل یونائٹیڈ ، بائیں بازو کی جماعتیں او رترنمول کانگریس وغیرہ جماعتوں نے اس کی مخالفت کی۔حالانکہ یہ جماعتیں خود کوسیکولرزم کا علمبردار اور اقلیتوں کا مسیحا قرار دیتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک کا وہ طبقہ جو گذشتہ ستر برسوں سے ترقی کی روشنی اور اس کے ثمرات سے محروم ہے وہ خود کوانتہائی بے بس محسوس کررہا ہے۔ جب تک اس طبقے میں خوشی اور خوشحالی نہیں آئے گی اس وقت تک سب کی ترقی کا خواب پورا نہیں ہوگا۔ بی جے پی لیڈر نے کہا کہ وزیر اعظم مودی تمام طبقات کے اسی خواب کو پورا کرنا چاہتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ تاہم اس کی مخالفت کرنے والی پارٹیوں کو یہ خوف لاحق ہے کہ اگر اقلیتوں کو ان کا جائز حق مل گیا تو نام نہاد سیکولر پارٹیوں کی دکان بند ہوجائے گی۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: So called secular parties blocking the progress of muslims naqvi in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply