دلتوں کا ملک گیر احتجاج تشدد میں تبدیل،6ہلاک،آتشزنی، کرفیو

نئی دہلی: مندرجہ فہرست ذات و قبائل انسداد مظالم قانون مجریہ1989 میں ترمیم کے حوالے سے سپریم کورٹ کے فیصلہ کے خلاف بھارت بند اور ملک گیر پیمانے پر دلتوں کا احتجاج تشدد میں بدل گیا جس میں جانی اتلاف کے ساتھ ساتھ سرکاری و نجی املاک کو بھی زبردست نقصان پہنچا۔
اب تک موصول اطلاع کے مطابق مدھیہ پردیش میں5، راجستھان میں ایک، اور اترپردیش کے فیروز آباد سے بھی ایک شخص کی ہلاکت کی خبر ملی ہے۔
اترپردیش کے مظفرنگر، میرٹھ ، ہاپوڑ اور غازی آباد سمیت کئی شہروں اور شاہراہوں پر گاڑیاں اور بسیں نذر آتش کر دی گئی۔مدھیہ پردیش کے بھنڈ میں،راجستھان کے باڑمیر ، جے پور کے علاوہ بہار، اڑیسہ اور پنجاب میں وسیع پیمانے پر توڑ پھوڑ اور آتشزنی کی وارداتیں ہوئیں۔
بھنڈ میں گروہی تصادم ہو گیا جس میں کم ا زکم30افراد زخمی ہو گئے۔ باڑ میر میںکئی گاڑیوں میں آگ لگا دی گئی۔
میرٹھ میں ایک پولس چوکی پھونک دی گئی۔ ملک کے کئی حصوں خاص طور پر مغربی اترپردیش میں حالات قابو سے باہر ہیں اور کئی مقامات پر کرفیو نافذ کر دیا گیا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Six killed in mp one in rajasthan during bharat bandh northern states witness violent protests in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply