بڑے نوٹوں کے بند ہونے سے امیر اور غریب کے درمیان فرق کم ہوجائے گا:راج ناتھ

لکھنؤ:مرکزی وزیرداخلہ راج ناتھ سنگھ نے آج کہا کہ 500اور 1000روپے کے نوٹوں کو بند کرنے کا فیصلہ ایک سوچے سمجھے منصوبہ کے تحت لیا گیا ہے۔اس سے کچھ لوگ دیوالیہ ہوسکتے ہیں مگر آخر میں یہ عمل کچھ حد تک غریب اور امیر کے درمیان کی کھائی کو کم کرےگا۔ مسٹر سنگھ نے کہا”ہم سیاست کے اصل معنی بتانے کی کوشش کررہے ہیں۔
سماج کا تقاضہ ہے کہ سیاست کو صاف ستھرا کیا جائے۔ہمارا فیصلہ صحیح معنی میں انتخابی عمل کو صاف شفاف اور صاف ستھرا بنانے میں مددگار ثابت ہوگا۔
“لکھنؤ یونیورسٹی کیمپس میں 69 ویں آل انڈیا کامرس کانفرنس کے افتتاحی سیشن سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر سنگھ نے کہا ”انتخابات میں امیدوار ووٹوں کو اپنے حق میں کرنے کے لیے شراب اور پیسے کا استعمال کرتے ہیں مگر نوٹوں کوبند کرنے کے بعد اس میں کمی آئے گی اور لوگ آنے والے انتخابات میں اس کا اثر دیکھیں گے۔
“ انہوں نے کہا کہ کچھ پارٹیاں اور رہنما ہمیشہ یہی سوچتے ہیں کہ اقتدار کس طرح حاصل کیا جائے۔میرا خیال ہی کہ انتخابات ہمیشہ حکومت بنانے کےلئے نہیں ہوتے بلکہ ملک اور معاشرے کی تعمیر کےلئے انتخابات مثالی ہونے چاہیے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Several people have gone bankrupt due to demonetisation rajnath in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply