سپریم کورٹ کا انا ڈی ایم کے کے18ممبران اسمبلی کی نااہلی کا کیس کسی اور عدالت منتقل کرنے سے انکار

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے اناڈی ایم کے کے18ممبران اسمبلی کی نااہلی کا کیس مدراس ہائی کورٹ سے کسی اور ریاستی ہائی کورٹ منتقل کرنے سے انکار کر دیا۔جسٹس ارون مشرا اور جسٹس ایس کے کول پر مشتمل تعطیل بنچ نے کیس منتقل کرنے کے بجائے ان 18ممبران اسمبلی کی نااہلی کے خلاف عرضی پر فیصلہ کرنے کے لیے مدراس ہائی کورٹ میں ایک تیسرے جج جسٹس ایم ستیہ نرائن کا تقرر کر دیا۔

ان نااہل قرار دیے گئے 18ممبران اسمبلی نے ہائیکورٹ کے منقسم فیصلہ کے بعد عدالت عظمیٰ سے رجوع کیا تھا اور اس سے استدعا کی تھی کہ ان کا کیس مدراس ہائی کورٹ سے کسی اور عدالت کومنتقل کر دیا جائے۔

واضح ہو کہ مدراس ہائی کورٹ کی دو ججی بنچ کی سربراہ چیف جسٹس اندر بنرجی نے نااہلی کو منظوری دی تھی تو وہیں دوسی جانب جسٹس سندر نے اس فیصلہ سے عدم اتفاق کیا۔

اب معاملہ ایسا موڑ اختیار کر گیا ہے کہ عدالتی فیصلہ آنے تک نہ توان18سیٹوں کے لیے ضمنی انتخابات کرائے جا سکتے ہیں اور نہ ہی ایوان میں حکومت کو اکثریت ثابت کرنے کہا جا سکتا ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Sc refuses to transfer 18 aiamdk mlas disqualification case in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply